جس ادارے پر کوئی جج اعتبار نہ کرے اُس پر عام آدمی کیا اعتبار کرے گا؟

hamid mir urdu columnist urdu writer

اِس برسات کے موسم نے پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی کے ساتھ جو کیا اُسے دیکھ کر قتیل شفائی کا یہ شعر یاد آتا ہے۔ دور تک چھائے تھے بادل اور کہیں سایہ نہ تھا اس طرح برسات کا موسم کبھی آیا نہ تھا یہ وہ بارش تھی جو رحمت سے زحمت بن مزید پڑھیں