حکومت قومی اسمبلی میں شکست کھانے سے بال بال بچ گئی




قومی اسمبلی میں اپوزیشن کی جانب سے ایک بل کو شکست دینے کے لیے حکومت بمشکل چھ ووٹوں کے فرق سے کامیابی حاصل کر سکی۔جبری طور پر لاپتہ کیے گئے افراد کے معاملے میں ملوث ہونے والوں کے خلاف مجرمانہ کارروائی کے لیے لایا گیا بل جب ووٹنگ کے لیے پیش کیا گیا تو اس کی حمایت میں پینسٹھ اور مخالفت میں 71 ووٹ آئے یوم بمشکل چھوٹو کے فرق سے حکومت اپوزیشن کے ہاتھوں قومی اسمبلی میں شکست کھانے سے بچ گئی یہ اہم ترین بل فاٹا امت حضرت نے قومی اسمبلی محسن داوڑ کی طرف سے پیش کیا گیا تھا موسم داوڑ کے پیش کردہ بل کی حمایت میں پاکستان پیپلز پارٹی مسلم لیگ نون اور جمعیت علمائے اسلام نے ووٹ دیا ۔محسن داور نے ووٹنگ کے بعد اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر دیے گئے پیغام میں لکھا کہ ایک طویل عرصے کے بعد میرے پیش کردہ بل پر ووٹنگ ہوئی اور پاکستان تحریک انصاف بری طرح ایکسپوز ہوگی کیونکہ انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے متعلق بل کی حکومتی بینچوں نے مخالفت کی جبکہ اپوزیشن ارکان نے میرا ساتھ دیا جس پر میں اپوزیشن جماعتوں پاکستان پیپلز پارٹی مسلم لیگ نون اور جے یو آئی کا شکرگزار ہوں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں