کراچی ایئر پورٹ امیگریشن کاوٴنٹر کی بدنظمی پر فخر عالم کا اظہار برہمی

پاکستان کے مشہور گلوکار فخر عالم نے اس بات پر سخت برہمی کا اظہار کیا ہے کہ کراچی ایئرپورٹ کے امیگریشن کاؤنٹر پر شدید بدنظمی دیکھنے میں آئی طویل قطاریں دیکھ کر ان سے رہا نہ گیا اور انہوں نے تصویریں کھینچ کر سوشل میڈیا پر ان تصویروں کو اپنے غصے بھرے کلمات کے ساتھ پوسٹ کر دیا ۔انھوں نے لکھا کہ عام سی بات ہے جب زیادہ فلائٹ سے زیادہ چیک آؤٹ سے تو آپکو کاوٴنٹر بڑھانے کی ضرورت ہے یہ بہت ہی بنیادی کامن سینس کی بات ہے دنیا بھر میں اب ایسے سافٹ ویئر موجود ہیں جو آپ کو اس طرح کی ہینڈلنگ میں مدد فراہم کرتے ہیں۔

فخر عالم نے جس بدنظمی کا اشارہ کیا ہے بین الاقوامی سفر کرنے والے مسافروں کی اس حوالے سے شکایات بہت پرانی ہیں آپ بیرون ملک جا رہے ہو یا باہر سے پاکستان آ رہے ہو آپ کو اس طرح کے حالات دیکھنے کو ملیں گے یہ صرف کراچی نہیں دیگر ایئرپورٹس پر بھی شکایات آتی رہتی ہیں بنیادی طور پر یہ سول ایوی ایشن ایف آئی اے امیگریشن اور متعلقہ اداروں کے درمیان کوآرڈینیشن کا معاملہ ہے اسے باآسانی بہتر بنایا جاسکتا ہے اگر رش کے اوقات میں زیادہ فلائٹس آرہی ہیں یا اکٹھی جارہی ہیں تو مسافروں کی تعداد میں یقین اضافہ ہوتا ہے جس سے امیگریشن کاؤنٹر پر دباؤ بڑھتا ہے عملہ کم ہونے کی وجہ سے زیادہ وقت لگتا ہے حکام کو چاہئے کہ کاؤنٹر کی تعداد بڑھائی یا عملے کی تعداد بڑھائی اور فلائٹس کے فروغ کو دیکھ کر فیصلہ کریں کہ کس شفٹ میں کس وقت زیادہ عملے اور زیادہ کاونٹرس کی ضرورت پڑتی ہے۔


اپنا تبصرہ بھیجیں