نیب کے سامنے ڈاکٹر ڈنشا کے چونکا دینے والے انکشافات

جب سے ڈاکٹر ڈنشا کو گرفتار کیا گیا ہے سیاسی حلقوں میں یہ تبصرے ہورہے ہیں کہ سابق صدر آصف علی زرداری کے خلاف مزید انکشافات کا امکان ہے سابق صدر آصف علی زرداری اور ان کے صاحبزادے بلاول بھٹو زرداری نے بھی اس دوران حکومت پر دباؤ بڑھا دیا ہے اب اطلاعات ملی ہیں کہ نی بن کے سامنے ملزم ڈاکٹر ٹنشن نے اہم چونکا دینے والے انکشافات کردیئے ہیں ڈاکٹر انکل سریا ڈنشا کی قانون میں اس وقت حیثیت ایک ملزم کی ہے جس سے جعلی



اکاؤنٹس کیس میں تفتیش کی جارہی ہے یہ تو تفتیش قومی  احتساب بیورو نیب کے آفس کرتی  نیب ذرائع کے مطابق تفتیش کے دوران گلیکسی کنسٹرکشن کمپنی کے شیئر ہولڈر ڈاکٹرز نشانے نئے افسران کے سامنے بیان ریکارڈ کرادیا ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ سندھ ریونیو افسران کی مدد سے باغ ابن قاسم میں قیمتی اراضی غیر قانونی طریقے سے ٹکرائیں گی باغ ابن قاسم میں پلاٹ نمبر 5 6 کا ایریا 2436 سے بڑھا کر 17 ہزار 330 اسکوائر فٹ کیا گیا ڈاکٹر رانجھا نے اعتراف کیا کہ کنسٹرکشن کمپنی کے ذریعے 2769 اسکوائر فٹ زمین 27 جولائی 2008 کو غیرقانونی طریقے سے الاٹ ہوئی جبکہ ستمبر2008کو باغ ابن قاسم میں دس ہزار آٹھ سو گیارہ اسکوائر فٹ رازی کمیٹی میٹنگ کے ذریعے علاج کرائیں نیب ذرائع کے مطابق افسران کے روبرو ڈاکٹر ڈنشا نے انکشاف کیا کہ کراچی ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے ڈی اے کے بعد افسران نے بھی الاٹمنٹ میں ساتھ دیا ۔



اپنا تبصرہ بھیجیں