علی ایسوسی ایٹس کے ڈائریکٹر ایم اے شاہ کی جیوے پاکستان ڈاٹ کام سے خصوصی گفتگو ملاقات ۔ وحید جنگ

گزشتہ دنوں دنیا بھر کی طرح پاکستان میں بھی ورلڈ انٹیلیکچوئل پراپرٹی ڈے منایا گیا۔ ہر سال دنیا بھر میں 26 اپریل کو یہ دن منایا جاتا ہے اس مرتبہ یہ دن منانے کے لیے اسپورٹس کی تھیم رکھی گئی تھی علی ایسوسی ایٹس کی جانب سے امریکی قونصلیٹ کراچی اور جیوسوپر کے اشتراک سے ڈبلیو ای پی ڈے کراچی میں منایا گیا اس موقع پر علی ایسوسی ایٹس کے ڈائریکٹر ایم اے شاہ نے جیوے پاکستان سے خصوصی نشست میں گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ پوری دنیا میں یہ دن منایا جاتا ہے ورلڈ انٹیلیکچوئل پراپرٹی آرگنائزیشن اس دن کو مناتی ہے اور پوری دنیا میں شعور اور آگاہی کو فروغ دینا اس کا مقصد ہوتا ہے ایک سوال پر انہوں نے بتایا کہ تقریبا سارے ملکوں میں ہیں آئی پی او کے تحت یہ تنظیم کام کرتی ہے جبکہ سوئٹزرلینڈ میں اسکو ورلڈ انٹیلیکچوئل پراپرٹی آرگنائزیشن WIPO کے نام سے جانا جاتا ہے.



انہوں نے بتایا کہ ہر مرتبہ ہر سال نئی تھیم متعارف کرائی جاتی ہے اس مرتبہ اسپورٹس کی تھیم رکھی گئی تھی ماضی میں نیوز اور سائنس سمیت مختلف گیمز متعارف کرائے جاچکے ہیں اسپورٹس کا مطلب بھی صرف کھلاڑیوں سے وابستگی نہیں بلکہ اس کی منیجمنٹ بھی ہوتی ہے اسپورٹس بھی ایک طرح سے پوری سائنس ہے اس کو سمجھنا اور اس میں سنجیدگی سے کام کرنا ضروری ہے یہ دن منانے کا مقصد دنیا بھر میں نقل کو روکنا ہے جس کو پائریسی کہتے ہیں یہ کسی کے حقوق کو چوری کرنا اس سے لوگوں کو روکنا اور اس سلسلے میں قوانین کی موجودگی اور ان کی آگاہی اور شعور کو فروغ دینا ہوتا ہے اس سلسلے میں انہوں نے ہونے والے کام کے اوپر روشنی ڈالی اور پاکستان جیسے ملکوں میں اس کام کے حوالے سے مزید شعور آگاہی کو فروغ دینے کے لیے میڈیا کے کردار پر بھی زور دیا آخر میں انہوں نے جیوے پاکستان ڈاٹ کام کی جانب سے عوام میں ورلڈ انٹیلیکچوئل پراپرٹی ڈے کے حوالے سے شعور آگاہی پیدا کرنے کے سلسلے میں کی جانے والی کوششوں کو سراہا اور جیوے پاکستان ڈاٹ کام کی ترقی اور کامیابی کے لئے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں