اسلام آباد پولیس نے کینیڈین ماڈل خاتون کو ہراساں کرنے والے ملزمان کو گرفتار کرلیا

اسلام آباد پولیس نے ان ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے جن پر کینیڈین نژاد پاکستانی ماڈل خاتون کو ہراساں کرنے کا الزام تھا ملزمان کے خلاف سہالہ پولیس اسٹیشن میں 16 اپریل کو مقدمہ درج کیا گیا تھا ملزمان پر الزام لگایا گیا تھا کہ ایک کار میں سوار دو نوجوانوں نے 15 اپریل کو اس وقت خاتون کو ہراساں کرنے کی کوشش کی جب وہ اسلام آباد میں ایک ٹیکسی کا انتظار کر رہی تھی گاڑی میں آنے والے نوجوانوں نے دوشیزہ پر آوازیں کسیں اور جب وہ گاڑی میں بیٹھ گئی تو گاڑی کے ڈرائیور کو اسے گاڑی سے اترنے پر مجبور کیا گیا اور اسلام آباد ایکسپریس وے پر اس کا تعاقب کیا گیا اور یہاں تک کہا گیا کہ اس کا گھر دیکھ کر آئیں گے جس کی وجہ سے ایک شاپنگ مال کے سامنے انہیں اتر کر کچھ دیر مزید انتظار کی تکلیف برداشت کرنا پڑی خاتون کے مطابق انہوں نے ریسکیو ون فائف کو اطلاع دیں مگر بعد میں متعلقہ پولیس اسٹیشن رابطہ کرنے کا مشورہ دیا گیا خاتون نے وزیراعظم کمپلین سیل پر رابطہ کیا جس پر سیکرٹری ہیومن رائٹس نے اس کی درخواست آئی جی اسلام آباد کو بھیجیں پولیس نے ملزمان کی ویڈیو بھی حاصل کی اور پھر دو ملزمان کی گرفتاری عمل میں آئی پولیس نے ملزمان کے زیر استعمال گاڑی بھی قبضے میں لے لی ہے جب کہ ملزمان ھمزہ سہیل اور انس کامران کی شناخت کینیڈین خاتون نے بھی کر لی ہے۔