اسد عمر کابینہ سے باہر – وزیراعظم عمران خان نے انرجی کی وزارت سنبھالنے کی پیشکش کی – اسد عمر نے شکریہ کے ساتھ معذرت کرلی

پی ٹی آئی کی حکومت کے لیے پہلا جھٹکا۔ کابینہ میں ردوبدل کے موقع پر وزیراعظم عمران خان کی جانب سے اسد عمر کو وزارت انرجی سنبھالنے کی پیشکش کی گئی لیکن اسد عمر نے شکریہ کے ساتھ معذرت کر لی ہے اور خود کو کابینہ سے الگ رکھنے کا فیصلہ کیا ہے جس کی منظوری عمران خان سے لے لی گئی ہے۔ خود اسد عمر نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر یہ بتایا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے کابینہ میں ردوبدل کے حوالے سے انہیں انرجی کی وزارت سنبھالنے کی پیشکش کی جس پر انہوں نے معذرت کرلی ہے اور خود کو کابینہ سے الگ رکھنے کا فیصلہ کیا ہے اور وزیراعظم عمران خان سے ان کی رضامندی بھی حاصل کر لی ہے اسد عمر نے اپنے یقین کا اظہار کیا ہے کہ عمران خان اور پی ٹی آئی اس ملک کی بہتری کی امید ہیں اور نیا پاکستان بنائیں گے۔ جب سے پی ٹی آئی کی حکومت آئی ہے اسد عمر کی وزارت خزانہ کی کارکردگی تنقید کی زد میں تھی جب پی ٹی آئی او پوزیشن میں تھی تو ساری امیدیں اسد عمر سے لگائی گئی تھی کہ وہ حکومت میں آ کر ملکی معیشت کی بگڑی حالت کو تیزی سے ٹھیک کر دیں گے ملکو غیر ملکی قرضوں سے نجات ملے گی آئی ایم ایف کے پاس نہیں جانا پڑے گا ایمنسٹی اسکیم اور دیگر معاملات کو سدھارا جائے گا لیکن جو کچھ ہوا وہ ان توقعات کے برعکس ھوا اور وزیراعظم عمران خان پر کابینہ میں ردوبدل خصوصا وزارت خزانہ میں اہم تبدیلیوں کے لیے دباؤ بڑھتا رہا عربوں خبر خود اسد عمر نے دے دی ہے جس کا انتظار کیا جا رہا تھا۔

As part of a cabinet reshuffle PM desired that I take the energy minister portfolio instead of finance. However I have obtained his consent to not take any cabinet position. I strongly believe Imran Khan PTI is the best hope for Pakistan and Inshallah will make a Naya Pakistan – Asad Umar

اپنا تبصرہ بھیجیں