سندھ حکومت۔ ممبر بورڈ آف ریونیو تمیزالدین کھیڑو سے ناراض ۔عہدے سے ہٹا دیا


وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ کی سرکار اپنے ہی ممبر بورڈ آف ریونیو تمیز الدین کھیڑو سے ناراض ہو گئی اور فوری طور پر تمیز الدین کھیڑو کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے ۔تمیز الدین کا تعلق ایکس پی سی ایس آفس سے ہے

وہ گریڈ 20 کے افسران ہیں ہیں 16 اکتوبر کو جاری کیے گئے نوٹیفکیشن کے مطابق انہیں فوری طور پر ہوتے سے ہٹاتے ہوئے محکمہ سروسز میں رپورٹ کرنے کی ہدایت کی گئی ہے اور انہیں فوری طور پر کوئی پوسٹنگ نہیں دی گئی ۔محکمہ سروسز کے

سیکشن افسر الطاف حسین کے دستخط سے جاری ہونے والا نوٹیفیکیشن چیف سیکرٹری کی منظوری کے بعد جاری کیا گیا ۔فوری طور پر تمیز الدین کو ان کے عہدے سے ہٹائے جانے کی وجہ سامنے نہیں آ سکی تمیز الدین کے قریبی ذرائع کے مطابق وہ کافی اپ سیٹ ہیں انہیں صوبائی حکومت نے بورڈ آف ریونیو میں آر اینڈ ایس ممبر کی حیثیت سے تعینات کر رکھا تھا جہاں سے انہیں ہٹا دیا گیا ہے

صوبائی حکومت نے انہیں ہٹانے کے حکم نامے کی کاپی پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ بورڈ اور پرنسپل سیکرٹری تو گورنر اور وزیر اعلی سمیت متعلقہ حکام کو بھجوا دی ہے