عبدالشکور شیخ نے چار سال سفارتخانے میں گزارے ہیں اور انہوں نے جس طرح کاروباری افراد اور ورکرز کو درپیش مسائل کو حل کرنے کی کوشش کی ہے اسکو ہمیشہ یاد رکھا جاے گا،

ریاض ( ثناء بشير ) سعودی عرب میں معروف سیاسی و سماجی شخصیت شیخ سعید احمد کی جانب سے سفارت خانہ پاکستان کے ویلفئیر اتاشی عبدالشکور شیخ کے اعزاز میں الوداعی عشائیہ کا اہتمام کیا گیا جس میں سفارت خانہ پاکستان کے دیگر افسران میں کیمونٹی ویلفئیر اتاشی محمود لطیف، ہیڈ آف چانسری عمر منظور ملک، منسٹر ٹریڈ اینڈ انوسٹمنٹ اظہر داہر کے علاوہ اہم سعودی شخصیات اور کیمونٹی ممبران نے شرکت کی اس موقعہ پر شرکاء نے عبدالشکور شیخ کی بطور ویلفئیر اتاشی خدمات کو سراہا اور کہا کہ گزشتہ چار سال کے دوران جس تندہی اور فرض شناسی کے ساتھ انہوں نے ویلفئیر کے سیکشن میں کام کرکے تیزی لائی ہے اس کی مثال نہیں ملتی، سفارت خانے میں روزانہ سینکڑوں افراد ویلفیر سیکشن میں آتے ہیں جن کو خدمات فراہم کرنا کسی چیلنج سے کم ہے مگر عبدالشکور شیخ نے اسے ہمیشہ ممکن بنائے رکھا یے کہ ورکرز کے مسائل کو جلد از جلد حل کیا جاے، الوداعی عشائیے کے میزبان شیخ سعید احمد نے کہا کہ عبدالشکور شیخ نے چار سال سفارتخانے میں گزارے ہیں اور انہوں نے جس طرح کاروباری افراد اور ورکرز کو درپیش مسائل کو حل کرنے کی کوشش کی ہے اسکو ہمیشہ یاد رکھا جاے گا، سفارت خانہ پاکستان اور کیمونٹی ممبران کے درمیان ہمیشہ باہمی ہم آہنگی قائم رہی ہے اور یہی وجہ ہے کہ ہر مشکل وقت میں سفارت خانہ اور کیمونٹی کی مدد سے ملک و قوم کی خدمت کا فریضہ احسن انداز سے انجام پایا ہے، ہم دعا گو ہیں کہ عبدالشکور شیخ نے اپنی چار سالہ ملازمت کے اس حصے میں جس طرح کام کرکے اپنا آپ منوایا ہے یہ اسی طرح پاکستان کی بیوروکریسی میں رہ کر مزید ترقی کریں اور لوگوں کی اسی طرح خدمت کو انجام دیتے رہیں اس موقعہ پر عبدالشکور شیخ نے کہا کہ ریاض میں مقیم کیمونٹی نے جس قدر پیار اور محبت سے نوازا ہے اس کو کبھی فراموش نہیں کیا جاسکتا، دارالحکومت ریاض میں جس طرح کی کیمونٹی موج د ہے ایسی دنیا بھر میں نہیں ہے یہاں لوگ سیاسی وابستگیوں سے اوپر ہوکر ایک ہوکر سوچتے ہیں اور پاکستان کی بہتری کی بات کرتے ہیں یہاں کی کیمونٹی ایک مثالی کیمونٹی ہے ایک گدستے کی مانند جس نے ہمیشہ سعودی عرب میں رہ کر اپنی سرگرمیوں اور اچھے اخلاص کے ساتھ ملک کا نام روشن کیا ہے میں یہاں سے ملنے والہ پیار کبھی بھول نہیں سکتا میری کوشش ہوگی کہ پاکستان میں رہ کر اس خوبصورت کیمونٹی سے جڑا رہوں، تقریب کے آخر میں سعودی شخصیات کی جانب سے بھی شیخ عبدالشکور کو نیک خواہشات سے نوازا گیا