پلاسٹک سے بنے نوٹ کا اجراء کردیا

سعودی سرکاری میڈیا کے مطابق پولیمر سے بنے نئے کرنسی نوٹ میں تمام سیکیورٹی فیچرز موجود ہیں اور یہ طویل عرصے تک استعمال کے قابل رہیں گے۔

سعودی مالیاتی ادارے کا مزید کہنا ہے کہ 5 ریال کے کرنسی نوٹوں کے بعد باقی کرنسی نوٹ بھی مرحلہ وار پلاسٹک سے تیار کرکے جاری کئے جائیں گے۔

ساما کے مطابق نئے پلاسٹک کے کرنسی نوٹ ہونے کے ساتھ ساتھ ان پر آنے والی لاگت بھی کافی کم ہے جبکہ جعلسازی بھی ممکن نہیں اور نوٹ پر ہاتھ سے لکھا بھی نہیں جاسکتا۔

واضح رہے کہ یہ پہلا موقع ہے جب کسی عرب ملک کی جانب سے پلاسٹک کرنسی نوٹ کا اجراء کیا گیا۔

Courtesy Samaa news