سندھ سیکریٹریٹ میں گاڑیوں کے نئے پارکنگ پلان سے افسران اور وزیٹرز خوش

سندھ سیکریٹریٹ میں گاڑیوں کے نئے پارکنگ پلان سے افسران اور وزیٹرز خوش۔طویل عرصے بعد سندھ سیکریٹریٹ میں سرکاری گاڑیوں کی پارکنگ کے مسئلہ کو حل کردیا گیا اور یہاں ضروری کاموں سے آنے والے سرکاری افسران اور ملازمین کی گاڑیوں کی پارکنگ کا بھی اب پیپلز اسکوائر میں مختص کی گئی پارکنگ کے ذریعے ان کا انتظام ہو گیا ہے کافی عرصے سے یہ شکایت سامنے آ رہی تھی کہ سندھ سیکرٹریٹ کے اندر ڈبل اور ٹرپل پارکنگ کی وجہ سے گزرنا محال ہو جاتا ہے اور افسران کو اور ملازمین کو وہاں پر اپنی گاڑیاں گزارنا اور پار کرنا ایک مشکل مرحلہ بن جاتا ہے سندھ سیکرٹریٹ میں گاڑیوں کی بہت زیادہ تعداد میں آنے سے مسائل پیدا ہو رہے تھے جس کا حل تلاش کرنے کے لئے ایک جامع پلان تیار کیا گیا موجودہ سیکرٹری جنرل ایڈمنسٹریشن سعیداحمد منگنیجو نے یہ


چیلنج قبول کیا اور گریڈ 18 اور اس سے اوپر کے افسران کو گاڑیاں پارک کرنے کی اجازت دی گئی جبکہ باقی آپ سنا دو ملازمین کو اپنی گاڑیاں پیپلز پارٹی کی پارکنگ میں لے جانے کی ہدایت کی گئی اس طرح بڑی تعداد میں گاڑیاں پیپلز اسکوائر کی پارکنگ تو استعمال کر سکتی ہیں جس کا مثبت نتیجہ یہ نکلتا ہے کہ اب سندھ سیکریٹریٹ کے اندر گاڑیوں کی تعداد میں نمایاں کمی آ گئی ہے اور آنے والے دنوں میں افسران کو پارکنگ کی باقاعدہ جگہ الاٹ کی جائے گی اس طرح مزید آسانی ہو جائے گی سندھ سیکرٹریٹ میں ایک اندازے کے مطابق گیارہ سو موٹر سائیکلیں بھی آتی ہیں ان کو بھی اب بڑی تعداد میں پیپلز اسکوائر کی طرف لے جایا جائے گا ۔ماضی میں بھی اس جانب توجہ دلائی جاتی رہی لیکن مسئلہ حل نہیں ہو سکا تھا اور لوگ بہت پریشان تھے اور یہاں پر گاڑیوں کی پارکنگ بڑا مسئلہ بنا ہوا تھا اب سندھ سیکریٹریٹ کی اندرونی سڑک اور اس کے فتوں کی تزئین و آرائش اور صفائی ستھرائی کا کام بھی تیز کر دیا گیا ہے اور یہ خوش آئند بات ہے اور اس کو یہاں آنے والے افسران اور ملازمین سمیت عام بجٹ نے بھی خوش آئند قرار دیا ہے اور اس حوالے سے کئے جانے والے فیصلوں اور اقدامات کو سراہا جا رہا ہے بعض ملازمین اور افسران کو وقتی طور پر پارکنگ میں مسائل کا سامنا ہے لیکن جو فیصلے کیے گئے ہیں اس کے دور رس نتائج ہوں گے اور سندھ سیکریٹریٹ میں گاڑیوں کی پارکنگ کے حوالے سے مجموعی طور پر بہتری آئے گی