حب ڈیم پانی سے بھر گیا ہے پھر بھی اہل کراچی کو ٹینکرز کا محتاج بنایا ہوا ہے:پاسبان


سندھ حکومت کے الیکٹرک اور واٹر بورڈ کے خلاف کاروائی کرے:طارق چاندی والا

عوام پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں،حکام بھاری تنخواہیں لے کر مزے کر رہے ہیں 

 عوام کوسستی اشیاء،سستی تعلیم، بلاتعطل سستی بجلی وپانی ملے گا تو حکومت چلے گی ورنہ نہیں 

کراچی ( )  پاسبان ڈیموکریٹک پارٹی کے جوائنٹ سیکریٹری اور کراچی چارٹر سٹی اینالائزنگ پراجیکٹ کے ڈائریکٹر طارق چاندی والا نے کہا ہے کہ حالیہ بارشوں سے کراچی کے اطراف کے تمام ڈیم پانی سے بھر چکے ہیں اس کے باوجود کراچی میں پانی کی قلت ہے۔  کراچی کے شہریوں کو سازش کے تحت ٹینکرز مافیا کا محتاج بنایا ہوا ہے۔  کراچی میں پانی اور بجلی کے بحران کی ذمیدار سندھ اور وفاقی حکومتیں ہیں۔   کراچی کے بیشتر علاقے پائپ لائنز کے ذریعے پینے تک کے صاف پانی کے حصول سے محروم ہیں۔  جبکہ مختلف علاقوں میں سیوریج اور ابلتے گٹروں نے سڑکیں اور گلیاں تباہ کر رکھی ہیں۔  کراچی کی بہتری، ترقی اور خوشحالی کے لئے اسے چارٹر سٹی کا آئینی درجہ دیا جانا ناگزیر ہے۔ 


 عوام کوسستی اشیاء،سستی تعلیم،سستا علاج معالجہ اور بلاتعطل سستی بجلی وپانی ملے گا تو حکومت چلے گی ورنہ نہیں۔  پاسبان  پریس انفارمیشن سیل سے جاری کردہ بیان میں طارق چاندی والا نے مزید کہا کہ کراچی میں بجلی کے بعد اب سوئی گیس بھی غائب ہوتی جار ہی ہے۔  پینے کا پانی  تو دور پانی ہی میسر نہیں ہے، ابلتے گٹر، ٹوٹی پھوٹی سڑکیں، تباہ حال ٹرانسپورٹ اور کچرے کے ڈھیر دیکھ کر یہ کہنا مشکل ہے کہ یہ کبھی روشنیوں کا شہر ہوا کرتا تھا۔  حالیہ بارشوں نے جہاں صوبائی حکومت اور انتظامی اداروں کی ناقص کارکردگی کی قلعی کھولی دی ہے  وہیں کراچی کے دیرینہ پانی کے مسئلہ کو بھی حل کردیاہے۔  کراچی کے آس پاس کے تمام ڈیم انی سے بھر چکے ہیں، کافی عرصہ تک کا پانی کا ذخیرہ ہو گیا ہے۔  لیکن افسوس کی بات ہے کہ اس کے باوجود اہل کراچی آج بھی پائپ لائنز کے ذریعے پانی کی فراہمی سے محروم ہیں۔  واٹر ایند سیوریج بورڈ کے نا اہل اور کرپٹ افسران کی وجہ سے کراچی شہر میں ٹینکرز مافیا کا راج ہے جو من مانے داموں عوام کو لائنوں کا پانی بیچتے ہیں۔  صوبائی حکومت ھی اس مافیا کے آگے مکمل طور ر مفلوج اور ناکام نظر آرہی ہے۔  آج شہر کے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں، بجلی کے تعطل کا شکار ہیں۔  واٹر بورڈ کے حکام اور بجلی کے محکمے کے افسران عوام کی اذیت اور تکالیف کو نظر انداز کر کے بھاری تنخواہیں لے کر مزے کر رہے ہیں۔   ایک طرف گرمی میں شہریوں کو پانی نہیں مل رہا تو دوسری طرف کے الیکٹرک  لوڈ شیڈنگ کے زریعے کراچی کے عوام کو دوہرے عذاب میں مبتلا کئے ہوئے ہے۔  سندھ سرکار فوری واٹر بورڈ اور ٹینکرز مافیا کے خلاف ایکشن لے کر کراچی کے شہریوں کو پانی کی قلت کے دیرینہ مسئلہ سے نجات دلائے۔  کراچی کو چارٹر سٹی کا آئینی حق دیا جائے تا کہ بجلی و پانی اور دیگر بنیادی سہولتیں عوام کو بلا تعطل مل سکیں #

کراچی (    ) پاسبان ڈیموکریٹک پارٹی کے تحت اورنگی ٹاؤن، علیگڑھ کالونی میں تنظیم سازی  اور بلدیاتی انتخابات کی تیاری کے حوالے سے میٹنگ ہوئی جس میں پاسبان کراچی کے جنرل سیکریٹری سردار ذوالفقار، ڈسٹرکٹ ویسٹ کے صدر خالد صدیقی ایڈووکیٹ، اورنگی ٹاؤن کے ذمہ داران رعنا اعجاز، سجاول، شاہد صدیقی، یامین صدیقی،وقاص قریشی و دیگر بھی موجود تھے۔  میٹنگ میں تنظیم سازی، بلدیاتی انتخابات کی تیاریاں، تمام یوسیز میں بلدیاتی نمائندوں کے انتخاب کے حوالے سے کارکنان کو بریفنگ دی گئی۔ مزید برآں اورنگی میں بہت جلد منعقد کئے جانے والے جلسے کی تیاریوں کے حوالے سے بھی ڈسکشن ہوئی#