سڑکوں پر گڑھوں کی مرمت کا کام ترجیحی طور پرکیا جا رہا ہے کمشنر کراچی سہیل راجپوت

کمشنر کراچی سہیل راجپوت نے بارش کی وجہ سے متاثر ہونے والی ان سڑکوں کی مرمت کا کام جلد از جلد مکمل کرنے کی ہدایت کی ہے انھوں نے کہا ہے کہ سڑکوں پر گڑھوں کی وجہ سے شہریوں کو تکلیف کا سامنا ہے مختلف مقامات پر گڑھوں کی وجہ سے ٹریفک کی روانی متاثر ہورہی ہے
ایمر جنسی کی صورتحال ہے ہنگامی بنیاد پر کام کرنے کی ضرورت ہے ترجیحی اقدمات کر کے متاثرہ سڑکوں کی مرمت کا کام جلد از جلد مکمل کیا جائے وہ اپنے دفتر میں متاثرہ سڑکوں کی مرمت کے اقدمات کاجائزہ لینے والے اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ اجلاس میں سیکریٹری ورکس اینڈ سروسز عمران عطا سومرو ایڈیشنل کمشنر ون اسد علی خان، ڈی آئی جی ٹریفک جاوید مہر ،میونسپل کمشنر بلدیہ عظمی ڈاکٹر سیف الرحمان ، تمام ڈپٹی کمشنرز و ضلعی ایڈمنسٹریڑز، چیف انجیئر واٹر بورڈ شیخ سعید احمد، ایس آئی ڈی سی ایل کے سی او او بلال میمن اور دیگر نے شرکت کی ۔ اجلاس میں مختلف 26 سڑکوں پر ترجیحی اقدامات کر کے جلد از جلد گڑھوں کی مرمت کا کام مکمل کیا جائے گا۔ جبکہ فوری نوعیت کے منصوبے تین روز مکمل کر کے ان سڑکوں پرٹریفک کو روان کیا جائے گا فیصلہ کیا گیا کہ ورکس اینڈ سروسز ڈپارٹمنٹ حکومت سندھ، واٹر اینڈ سیوریج بورڈ، بلدیہ عظمی ، ضلعی بلدیات اور ایس آئی ڈی سی ایل سڑکوں کی مرمت کا کام کرنے کی ذمہ دار ہوںگی اپنے اپنے محکموں کے مالی وسائل سے ان منصوبے ترجیحی اقدمات کر کے ہنگامی بنیادوں پر مکمل کریں گی۔ڈی آئی جی ٹریفک جاوید مہر، میونسپل کمشنر بلدیہ عظمی ڈاکٹر سیف الرحمان، ڈپٹی کمشنرز نے کمشنر کو متاثرہ سڑکوں کی صورتحال اور ان کی مرمت کے جاری کام کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی ۔ کمشنر کو بتایا گیا کہ بارش کی وجہ سے 194 سے زائد واٹر بورڈ جو لائنیں دہنس گئی تھیں ان کی مرمت مکمل کر لی گئی ہے اور وہاں ٹریفک کو رواں کر دیا گیا ہے نو سے زائد سڑکوں پر اب بھی کام جاری ہے جو جلد مکمل کر لیا جائے گا۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ڈپٹی کمشنرز جو ضلعی ایڈمنسٹریٹرز بھی ہیں متاثرہ سڑکوں کی مرمت کے کام کی نگرانی کریں گے اور یقینی بنائین گے کہ جلد از جلد کام مکمل ہو۔ فیصلہ کیا گیا کہ وہ ہر روز کمشنر کو کارکردگی رپورٹ پیش کریں گے۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ ۔26 مقامات پرسڑکوں پر گڑھوں کی وجہ سے ٹریفک کی روانی متاثر ہے۔ کمشنر نے کہا کہ ہنگامی صورتحال ہے ہنگامی بنیادو پر کام کیا جائے تاکہ متاثرہ سڑکوں پر ٹریفک کی روانی کو بہتر بنایا جا سکے َ ٰا
کمشنر نے ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی کہ وہ ترجیحی کوششیں کریں ہر سڑک کی مرمت کے منصوبہ پر عملدرآمد کے لیئے خصوصی منصوبہ بنائیں تاکہ تمام منصوبوں پر انفرادی توجہ دی جا سکے۔ تمام سڑکوں پر ان کی اہمیت کے لحاظ سے ترجیحات کا تعین کیا جائے