صوبائی وزیر سید ناصر حسین شاہ کی والدہ کا رسمِ قُل، اہم سیاسی، سماجی شخصیتوں اور افسران کی بڑی تعداد میں شرکت

سابق وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ، علی گوہر خان مہر، بنگل خان مہر، مرتضیٰ وہاب، سید اویس قادر شاہ اور دیگر شریک۔
صوبائی وزیر اطلاعات و بلدیات سید ناصر حسین شاہ کی والدہ کا سوئم روہڑی کے گھانگھوٹی گراؤنڈ میں ہوا۔
رسمِ قُل میں دعا معروف عالم دین مولانا سید عالم شاہ موسوی نے کرائی۔ سید ناصر حسین شاہ کی والدہ کے رسمِ قُل میں سابق وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ، سردار علی گوہر خان مہر، سردار بنگل خان مہر، وزیر اعلیٰ سندھ کے مشیر بیرسٹر مرتضیٰ وہاب، وزیر اعلی سندھ کے کوارڈینیٹر شہزاد میمن، صوبائی وزیر سید اویس قادر شاہ، سینیٹر مولا بخش چانڈیو،رکن قومی اسمبلی نعمان اسلام شیخ، بیرسٹرارسلان اسلام شیخ سمیت اہم سیاسی، مذہبی،سماجی شخصیات، رشتہ داروں، دوست احباب، پیپلزپارٹی کے عہدیداروں، کارکنان اور شہریوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ دریں اثناء سینئر صحافیوں شاہدجتوئی، ضیاء قریشی، طاہر حسن خان، سالک مجید، نیاز کھوکھر، محبوب عباسی، شفیق احمد پیرزادہ، سی او میڈاس انعام اکبر، ڈائریکٹرانفارمیشن سید محمد عظیم شاہ، ڈائریکٹر انفارمیشن محمد شبیہ صدیقی، مولانا سیدارشاد حسین شاہ، مولانا سید اسد اقبال زیدی، اسد علی شر، امتیاز شاہ، شبر زیدی، محمد صدیق راٹھور، سید سرکار حسین شاہ، سید توقیر شاہ، امام ڈنو ملاح اور دیگر نے بھی سوئم میں شرکت کی اور صوبائی وزیر سید ناصر حسین شاہ سے ان کی والدہ کے انتقال پر تعزیت و فاتحہ خوانی کی۔
چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ کی صوبائی وزیر اطلاعات سے ان کی والدہ کی وفات پر تعزیت۔
مختلف محکموں کے سیکریٹریز، کمشنر، ڈپٹی کمشنر اور دیگر اعلیٰ افسران کی جانب سے صوبائی وزیرسے تعزیت۔
سکھر: چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ نے روہڑی پہنچ کر صوبائی وزیر اطلاعات سید ناصر حسین شاہ کی والدہ کے رسمِ قُل میں شرکت کرکے تعزیت کا اظہار کیا اور فاتحہ پڑھی۔ اس کے علاوہ سیکریٹری قانون سندھ منصور عباس، سیکریٹری زرااعت عبدالرحیم سومرو، کمشنر سکھر ڈویژن شفیق احمد مہیسر، ڈی آئی جی سکھر فدا حسین مستوئی، ڈپٹی کمشنر رانا عدیل تصور،ایس ایس پی عرفان سموں، ڈی جی سالڈ ویسٹ مینجمنٹ کاشف گلزار شیخ،چیئرمین اسٹیویٹا سلیم جلبانی، ڈائریکٹر ایجوکیشن عبدالعزیز ہکڑو اور دیگر نے صوبائی وزیر سید ناصر حسین شاہ سے ان کی والدہ کے انتقال پرتعزیت کا اظہار کیا اور فاتحہ پڑھی۔