ستمبر 1965 کی جنگ کے ہیروز کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لیے آج ملک بھر میں یوم بحریہ منایا جارہا ہے۔

پاک بحریہ ملک کی سمندری حدود اور مفادات کی حفاظت کی مکمل صلاحیت رکھتی ہے: پاک بحریہ کے سربراہ ایڈمرل ظفر محمود عباسی
کراچی: پاک بحریہ کے ہیروز کی قربانیوں اور بہادری کے جذبے کے اعتراف کے طور پر منایا جاتا ہے جنہوں نے 1965 کی جنگ کے دوران جرأت اور شجاعت کی داستانیں رقم کیں۔
7 اور 8 ستمبر 1965 کی رات کو پاک بحریہ کے 7 جہازوں پر مشتمل بحری بیڑے نے آپریشن کوڈ سومناتھ میں بھارتی بندرگاہ دوارکا پر دلیرانہ حملہ کیا اور بھارت کی اہم ساحلی تنصیبات اور ریڈار نظام کو تباہ کردیا۔
اسی جنگ میں پاک بحریہ کی آبدوز غازی کی جانب سے پورے بھارتی فلیٹ کو ایک جگہ محصور کرکے رکھنا، اس دن کی قابل فخر یاد داشتیں ہیں۔
اسی دن کی مناسبت سے پاک بحریہ کے سربراہ ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے کہا کہ پاک بحریہ ملک کی سمندری حدود اور مفادات کی حفاظت کی مکمل صلاحیت رکھتی ہے۔ اپنے پیغام میں سربراہ پاک بحریہ کا کہنا تھا کہ پاک-چین اقتصادی راہداری (سی پیک) منصوبے کے آغاز کے بعد سے پاک بحریہ اپنی بڑھتی ہوئی ذمہ داریوں اور گوادر پورٹ کی کامیابی اور سلامتی کے لیے اپنے کردار سے بخوبی آگاہ ہے۔