ایک نکاتی ایجنڈا ۔غیر قانونی تعمیرات برداشت نہیں کی جائیں گی۔ ڈی جی سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی آشکار داور

سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل اشکار داور نے واضح طور پر اعلان کیا ہے کہ ان کا ایک نکاتی ایجنڈا ہے غیر قانونی تعمیرات برداشت نہیں کی جائیگی ۔ جس نے خلاف ورزی کر رکھی ہے وہ سخت مشکل میں آنے والا ہے ہم قانون کے دائرے میں رہ کر کاروائی کریں گے اور سب سے پہلے ان تعمیرات کے خلاف ایکشن ہوگا جو زیر تعمیر ہیں انڈر کنسٹرکشن غیر قانونی تعمیرات کے خلاف فوری طور پر کاروائی عمل میں لائی جائے گی کسی صورت اس مافیا کو برداشت نہیں کیا جائے گا یہ بہت مضبوط رابطے والا مافیہ ہے جس طرح ڈرگ مافیا اور دیگر مافیاز ہوتے ہیں اسی طرح یہاں پر بھی بڑے منظم انداز سے یہ مافیا کام کرتا ہے کم وقت میں زیادہ پیسہ لوگوں نے کمانے کا یہ راستہ نکالا ہے اور غیر قانونی تعمیرات کی بھرمار ہے شہر میں کوئی جگہ ایسی نظر نہیں آتی جہاں غیر قانونی تعمیرات نہ ہو اور سٹی ایریا میں بہت زیادہ پروبلم ہے اسی طرح ڈسٹرکٹ سینٹرل میں بہت زیادہ غیر قانونی تعمیرات کی شکایات ہیں غیر قانونی عمارتوں کی وجہ سے حادثات کا خطرہ رہتا ہے انہوں نے تسلیم کیا کہ چوری اس وقت تک نہیں ہو سکتی جب تک گھر کا کوئی بھی شامل نہ ہو یہاں پر بھی مضبوط نیٹ ورک بنا کر یہ سارے کام کیے گئے ہیں انہوں نے کہا کہ غیر قانونی تعمیرات کراچی کے ماتھے پر بدنما داغ ہیں بلڈر مافیا منشیات سے بڑی معافیہ ہے جب تک سزائیں نہیں ہوگی غیر قانونی تعمیرات کا سلسلہ نہیں رک سکتا ۔سماء کے نمائندے محمد علی حفیظ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میرا ایک نکاتی ایجنڈا ہے غیر قانونی تعمیرات کسی صورت برداشت نہیں کی جائیگی ۔۔ انہوں نے کہا کہ شہر میں کون ایسا نہیں جہاں تجاوزات نہ ہو انہوں نے بتایا کہ پہلے مرحلے میں زیر تعمیر تجاوزات مسمار کی جائیں گی ضلع بستی میں سب سے زیادہ تجاوزات ہیں انہوں نے بلڈر مافیا کو خبردار کیا اور کہا کہ اپنا قبلہ درست کر لیں ورنہ ہم قانون کے دائرے میں رہ کر وہ کاروائی کریں گے کہ سب کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا لیاقت آباد گلبرگ ٹاؤن فیڈرل بی ایریا صدر رام سوامی رنچھوڑ لائن کوارٹرز اولڈ سٹی ایریا کھارادر میں بہت زیادہ غیر قانونی تعمیرات ہو رہی ہیں وہاں پر ایکشن لیا جائے گا بولنا پہلو یہ ہے کہ بغیر کسی ڈیزائن اور بغیر کسی سپرویژن کے چھوٹے بچوں پر کثیر المنزلہ عمارتیں تعمیر کی گئی ہیں یا پہلے سے پرانی تعمیرات پر مزید تعمیرات کی جاتی ہیں جن سے حادثات کا خطرہ ہے کیونکہ یہ اتنی خطرناک ہوتی ہیں کہ کسی بھی وقت کوئی حادثہ رونما ہو سکتا ہے