غیر متوقع اور ریکارڈ توڑ بارشوں سے سندھ بھر میں تباہی ہوئی ہے

کراچی(اسٹاف رپورٹر)کراچی سمیت سندھ کے دیگر اضلاع میں موسلا دھار بارشیں، سندھ حکومت کے ترجمان مشیر قانون ، ماحولیات و ساحلی ترقی بیرسٹر مرتضی وہاب نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ غیر متوقع اور ریکارڈ توڑ بارشوں سے سندھ بھر میں تباہی ہوئی ہے کراچی کے تمام اضلاع بُری طرح متاثر ہیں بارشوں سے انسانی جانوں کے ضیاع اور گھروں میں ہونے والے نقصان پر ہمیں بے حد افسوس ہے۔بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ کراچی کے تمام اضلاع میں سرکاری مشینری متحرک ہے ضلع ملیر اور غربی میں بے گھر ہونے والے افراد کو متبادل عارضی رہائش فراہم کی گئی ہے متاثرہ افراد کو مختلف اسکولوں اور عارضی کیمپس میں ٹہرایا گیا ہے بعض مقامات پر متاثرہ افراد عارضی کیمپس میں جانے سے گریز کررہے ہیں تاہم انہیں گھروں اور انکے علاقوں میں ہی تیار کھانا فراہم کیا جارہا ہے بیرسٹر مرتضی وہاب نے شہریوں سمیت تمام اسٹیک ہولڈرز سے درخواست کہ وہ سندھ حکومت کا ہاتھ بٹائیں بہت مشکل وقت ہے اس گھڑی میں ہمیں ایک دوسرے کا ساتھ دینا ہے اپنے مصیبت زدہ بھائیوں کی امداد کرنا ہے انہوں نے کہا کہ وزیراعلی مراد علی شاہ نے افسران کے ہمراہ متاثرہ مقامات کا دورہ کیا ہے گزشتہ روز وزیراعلی مراد علی شاہ نے ایک روز میں سندھ کے سات اضلاع کا دورہ کیا جبکہ سندھ حکومت کے وزراء، مشیران اور معاونین خصوصی بھی فیلڈ میں موجود ہیں۔بیرسٹر مرتضی وہاب کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ کی جانب سے عوامی شکایات اور انکے ازالے کے لئے شکایتی نمبرز جاری کئے گئے ہیں جن پر عوام اپنی شکایات درج کروا سکتے ہیں انہیں فوری حل کیا جائیگا بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ یہ تنقید کا نہیں بلکہ لوگوں کو ریسکیو کرنے اور خدمت کا وقت ہے ریسکیو آپریشن میں تعاون پر پاک آرمی، نیوی اور دیگر اداروں کے تشکر کا اظہار کرتے ہیں سندھ حکومت اس مشکل گھڑی میں عوام کے ساتھ کھڑی ہے۔