سنجے دت کو علاج کیلئے امریکا کا ویزہ مل گیا

بالی ووڈ کے معروف اداکار سنجے دت کو پھیپھڑوں کے سرطان کے علاج کے لیے امریکا کا 5 سال کا ویزہ دے دیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ کے ’سنجو بابا‘ کے نام سے مشہور اداکار سنجے دت کو تیسرے درجے کے کینسر میں مبتلا ہونے کی تشخیص ہوئی تھی، جس کے بعد اُن کی اہلیہ مانیتا دت کی جانب سے بھارت میں اُن کا علاج شروع کرانے کی تصدیق بھی کی گئی تھی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈاکٹروں کی ہدایت پر اداکار نے امریکا کے ’میموریال سلون کیتھرنگ کینسر سینٹر‘ میں علاج کی غرض سے امریکا کے ویزے کے لیے رجوع کیا تھا۔ یہ وہی اسپتال ہے جہاں اداکار کی ماں نرگس دت بھی دو سال زیر علاج رہی تھیں۔
سنجے دت کے قریبی ذرائع کا کہنا ہے کہ اداکار کو فوری طور پر امریکا کا ویزا ملنا نا ممکن تھا کیوں کہ ویزہ ملنے کا مرحلہ ایک تو بہت طویل ہوتا ہے اور دوسرا اداکار 1993 کے بمبئی دھماکوں میں سزا بھی کاٹ چکے ہیں۔

ان تمام باتوں کے باوجود سنجے دت کے ایک دوست نے اُن کی مدد کی جس کی وجہ سے اُنہیں علاج کے لیے 5 سال کا ویزہ جاری کردیا گیا ہے۔

اداکار کے قریبی ذرائع کا کہنا ہے کہ سنجے دت بہت جلد کینسر کے علاج کے لیے امریکا روانہ ہو رہے ہیں اور کہا جا رہا ہے کہ تمام علاج کے دوران اُن کی اہلیہ اور دونوں بہنیں اُن کےساتھ رہیں گی۔

واضح رہے کہ ’میموریال سلون کیتھرنگ کینسر سینٹر‘ امریکا کا تاریخی کینسر کا اسپتال ہے جہاں سے اب تک نرگس دت، منیشا کوائرلہ اور سونالی باندرے بھی کینسر کا علاج کروا چکی ہیں۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ سنجے دت کی بیٹی تریشالا بھی نیویارک میں رہتی ہیں