پنو عاقل میں لرزا خیز واقعہ، ذہنی مریض نے گھر کے 10 افراد کو تیز دھار آلے سے قتل کر دیا

پنو عاقل میں قتل کا لرزا خیز واقعہ پیش آیا ہے۔ ایک ہی خاندان کے 10 افراد کو قتل کر دیا گیا۔تمام افراد کو گھر کے ہی فرد کی جانب سے قتل کیا گیا جو کہ ذہنی طور پر بیمار تھا۔۔تفصیلات کے مطابق سندھ کے ضلع سکھر کی تحصیل پنو عاقل میں ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے،جہاں ایک ہی خاندان کے 10 افراد کو قتل کر دیا گیا۔


ایس ایس پی سکھر عرفان سموں کے مطابق مقتولین کو چھریوں کے وار کر کے قتل کیا گیا۔قتل کیے جانے والے افراد میں 6 خواتین اور چار بچے شامل ہیں۔پولیس ذرائع کے مطابق 10 افراد کو قتل کرنے والے ملازم کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔سکھر پولیس نے تمام مقتولین کی لاشیں پوسٹ مارٹم کے لیے اسپتال منتقل کر دی ہیں۔مزید تفصیلات میں بتایا گیا ہے کہ مبینہ طور پر ذہنی مریض شخص نے گھر کے دس افراد کو قتل کیا جن میں ملزم کی ماں،بہن اور بیوی بھی شامل تھیں۔
ملزم تمام افراد کو تیز دھار آلے سے اس وقت قتل کیا جب وہ سو رہے تھے۔افسوسناک واقعہ کینٹ تھانہ کی حدود میں پیش آیا۔ملزم نے خاندان کے افراد کو قتل کرنے کے بعد یکے بعد دیگرے سر بھی قلم کر دئیے۔بتایا گیا ہے کہ واقعے کی اطلاع پولیس کو پڑوسیوں کی جانب سے دی گئی۔واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس کی ٹیمیں جائے وقوع پر پہنچ چکی ہیں جب کہ ایدھی کی ٹیمیں وہاں پر موجود ہیں،جس کے بعد میتوں کو اسپتال منتقل کرنے کا سلسلہ جاری ہے۔
اس واقعے کے بعد پورے علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے جب کہ تمام علاقے کو بھی سیل کر دیا گیا ہے۔لرزا خیز واردات سے لوگوں میں شدید خوف پھیل گیا ہے اور وہ گھروں میں بند ہو کر رہ گئے ہیں۔وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے بھی واقعے کا نوٹس لے لیا ہے اور واقعے کی رپورٹ طلب کر لی ہے
from-urdupoint-pages