مریم نواز 11 اگست کو نیب میں طلب

لاہور: قومی احتساب بیورو(نیب) نے مسلم لیگ ن کین مرکزی نائب صدر مریم نواز کو11 اگست کو طلب کرلیا ہے۔

نیب ذرائع کے مطابق مریم نواز کو رائے ونڈ میں 200 کنال زمین کی انکوائری سے متعلق طلب کیا گیا ہے۔

اطلاعات ہیں کہ مریم نواز نے 200 کنال زمین 2013 میں خریدی تھی اور دوران تفتیش ان سے آمدن کےذرائع پوچھے جائیں گے۔

نیب نے مریم نواز کو بھی 11 اگست کو دن 11بجے طلب کیا ہے اور متعلقہ دستاویزات بھی ہمراہ لانے کی ہدایت کی ہے۔ مریم نواز چوہدری شوگرملز کیس میں بھی ضمانت پر رہا ہیں۔

نیب کا موقف ہے کہ ن لیگی رہنما نے چوہدری شوگر ملز کے جعلی اکاونٹس چلانے میں اہم کردار ادا کیا اور نیب ان کے خلاف منی لانڈرنگ کی کارروائی کرنے کا اختیار رکھتا ہے۔

مریم نواز ایون فیلڈ(لندن فلیٹس) ریفرنس میں سزا یافتہ ہیں اور انہیں 7 سال قید کی سزا دی گئی مگر اسلام آباد ہائیکورٹ نے ان کی سزا معطل کر رکھی ہے۔

حکومت نے مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈال رکھا ہے اور ان کا پاسپورٹ بھی لاہور ہائی کورٹ کے پاس جمع ہے۔

اس سے قبل نیب نے مریم نواز کو2019 میں شوگر ملز کیس میں گرفتار بھی کیا تھا۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز کو نیب حکام نے چوہدری شوگر ملز کیس میں آٹھ اگست کو اس وقت گرفتار کیا تھا جب وہ کوٹ لکھپت جیل میں اپنے والد اور پی ایم ایل (ن) کے قائد نواز شریف سے ملاقات کے لیے گئی تھیں