ایف پی سی سی آئی میں پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کا پہلا اجلاس ہوا۔

کرا چی(4 اگست 2020) ایف پی سی سی آئی میں پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کے پہلے اجلاس کا انعقا د شیخ محد طارق چیئر مین پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کی سر براہی میں بذریعہ ویڈیو لنک ہو ا جس میں شیخ سلطا ن رحمان نائب صدر ایف پی سی سی آئی کے علاوہ بز نس کو نسل کے ڈائر یکٹر ز اور ممبر ز پاک بر طا نیہ جوائنٹ چیمبر کے نائب صدر عامر خواجہ بر طا نیہ میں مقیم پاکستان ہا ئی کمیشن سے شفیق شہزادنے شر کت کی۔ شرکا ء کا خیر مقدم کر تے ہو ئے ایف پی سی سی آئی کی پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کے چیئر مین شیخ محمد طا رق نے بر طا نیہ پر معیشت سے آگا ہ کیا جو کہ کر ونا کی وجہ سے برُی طر ح متا ثر ہو ئی ہے۔ انہو ں نے کہاکہ بر طا نیہ پاکستان کا اہم تجا رتی شراکت دار ہے جس نے پاکستان کی معیشت اور سماجی تر قی میں اہم کردار ادا کیا۔ انہو ں نے BREXITسے متعلق مختلف ممالک کے اقدامات سے آگاہ کیا جو انہو ں نے بر طانیہ سے تجا رت بڑھانے کے لیے کیے۔ انہو ں نے بتا یا کہ وہ رائل البر ٹ ڈاک جو کہ ایشیا ء کا بز نس حب ہے میں 2500 مر بع فٹ جگہ لینا چا ہتے ہیں جہا ں پاکستان بز نس سینٹر قا ئم کیا جا سکے۔ انہو ں نے اپنی کمپنی کی کسٹم ڈیکلیئریشن فا ئلنگ رجسٹریشن سے متعلق بھی آگا ہ کیا جو کہ وہ جنو ری 2021سے شروع کر ے گی اس کے علاوہ ان کی کمپنیBREXITکے بعد 250ملین کی کسٹم ڈیکلیئر یشن فا ئل کر ے گی۔ شیخ محمد طارق نے پاکستان کی بز نس کمیو نٹی پر زور دیا کہ وہ معیار اور SPSسے متعلق اقدامات کر یں کیونکہ بر طا نیہ اس وقت 1.2ملین ٹن گو شت درآمد کر رہا ہے اور بر طا نیہ بز نس حب بنا رہا ہے جہا ں تمام ممالک اپنے بز نس سینٹر قا ئم کر رہے ہیں۔ انہو ں نے مزید کہاکہ پاکستان کو قدرت نے مختلف قدرتی، معاشی، اور انسانی و سائل سے مالا مال کیا ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ ان وسائل کو استعمال کر کے معیشت کو بہتر کیا جائے اور روزگار کے مواقع پیدا کیے جا ئیں۔ انہو ں نے سیکٹر کی بنیا د پر پا لیسی پر زور دیا تا کہ مقاصد کو حاصل کیا جا سکے۔ انہو ں نے ای کامرس پر بھی زور دیا جسکی آج کے ما حول میں بے حد ضرورت ہے۔ شیخ محمد طا رق نے راونڈ ٹیبل کا نفر نس کے انعقا د کا کہاجس میں تمام حکومتی اداروں جیساکہ وزرات تجا رت، TDAP، بو رڈآف انو یسمنٹ، ایف بی آر، پاک بر طا نیہ چیمبر آف کامرس اور انڈ سٹر ی، SMEs،پاک اور بر طا نیہ کے اہم کا روباری حضرات شر کت کر یں گے۔ ایف پی سی سی آئی کے نائب صدر شیخ سلطا ن رحمان نے بتایا کہ پاکستان بر طا نیہ کے در میان تجا رت اس وقت پاکستان کے حق میں ہے بر طا نیہ کو پاکستان کی بر آمدات 1.7ارب ڈالر ہیں اور پاکستان بنیا دی طو ر پر ٹیکسٹائل، نٹ وئیر،ریڈ میٹ گا رمنٹس، بیڈ شیٹس اور چا ول بر آمد کرتا ہے۔ جی ایس پی پلس حاصل کرنے کے بعد پاکستان کی بر طا نیہ کو برآمد ات میں 0.3ارب ڈالر کا اضا فہ ہو اتھا جو کہ بنیا دی طو ر پر ٹیکسٹائل میں تھا۔ بر طا نیہ پاکستان کا تیسرا بڑا تجا رتی شراکت دار ہے اور اس کے باوجو د پاکستان اور بر طا نیہ کے در میان تجا رتی معاہدے کی ضرورت ہے جس سے GSP پلس جیسی سہولیا ت ملنی چا یئے اور بر طا نیہ کے ساتھ پاکستان کو تجا رت بڑھا نی چا ہیے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیاکہ پاکستان کا وفدنو مبر میں بر طا نیہ کا دورہ کر ے گا اور وہ ما نچسٹر چیمبر کے ساتھ معاہد ہ بھی کر ے گا اور دو نو ں ممالک کے در میان با ہمی سر مایہ کاری پر زور دیا گیا۔ شرکا ء نے BREXITکے بعد نئے تجا رتی معاہدو ں اور ڈیکلیئریشن سسٹم کا انتظام بہتر کرنے پر زور دیا۔

کیپشن فو ٹو:- ایف پی سی سی آئی میں پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کے پہلے اجلاس کا انعقا د شیخ محد طارق چیئر مین پاک بر طا نیہ بز نس کو نسل کی سر براہی میں بذریعہ ویڈیو لنک ہو ا جس میں شیخ سلطا ن رحمان نائب صدر ایف پی سی سی آئی کے علاوہ بز نس کو نسل کے ڈائر یکٹر ز اور ممبر ز پاک بر طا نیہ جوائنٹ چیمبر کے نائب صدر عامر خواجہ بر طا نیہ میں مقیم پاکستان ہا ئی کمیشن سے شفیق شہزادنے شر کت کی