مبحت :

مبحت :

کیا لکھیں کچھ سمجھ میں آ بھی رہا ہے اور کچھ نہیں بھی …..کچھ الفاظ ہماری نوکِ زبان پر آ رہے ہیں مگر آپس میں بہیت گڈ مڈ ہو رہے ہیں .
پہلے ہم مبحت کو کیا سمجھتے تھے لیکن اب کیا سمجھتے ہیں , یہ دو الگ الگ باتیں ہیں ..
 ہم مبحت کو پہلے کچھ تنگ نظر سے دیکھتے تھے ,مگر وقت نے, مبحت نے محبوب نے ,ماں پاپا نے ,باقی  گھر والوں نے سوسائٹی نے ھمارا اندازِ نظر بدل دیا.
ہم کوئی فلاسفرتو نہیں ہیں جو مبحت کی اچھے سے وضاحت کر سکیں گے, مگر ہم جتنا سمجھ سکیں ہیں اُتنا  لکھنا چاہتے ہیں …
ہم مبحت کی وضاحت کی تہمید کسی روائتی جملے پر نہیں رکھیں گے .
مبحت ایک جذبہ ہے , لیکن کیسا جذبہ ؟؟ یہ جذبہ ہمیں کیا سیکھاتا ہے ؟ کس راہ پر لے جاتا ہے ؟ مبحت ہوتی کس سے ہے ؟مبحت کو کامیاب کیسے بنایا جا سکتا ہے ؟
کچھ سوال پیدا ہوتے ہیں یہاں , اگر چہ یہ سوال دیکھنے میں بےحد آسان نظر آتے ہیں مگر یقین مانیے یہ آسان نہیں ہیں , لیکن اتنے کھٹن بھی نہیں ہیں کہ انسان ان سوالوں کے جواب تلاش کرنے میں ناکام رہیں .مبحت کیا ہے ؟
ہمیں لگتا “مبحت ایک ایسا احساس ہے جو انسان کو خود کی پہچان کرواتا ہے , خدا سے مِلاتا ہے , اور مبحت دل کی وہ کیفیت ہے کہ جب انسان کسی ذات کے ساتھ جُڑ جاۓ تو پھر اُس کے در و دیوار سے بھی مبحت ہوتی ہے ,اُس کے کوچہ و بازار سے بھی مبحت ہوتی ہے لب و رخسار , زلفیں تو رہی فانی چیزیں اُسکی روح آپکو خود میں محسوس ہونے لگتی ہے   ”
یہ بات سمجھنے میں ہمیں بھی کافی وقت لگا ..
مگر آخر  سمجھ میں آیا …..
ہم نے سُنا تھا کہ مبحت میں انسان اندھا ہو جاتا ,اسے سہی ,غلط کی پہچان نہیں رہتی ….
انسان بےمروت ہو جاتا , رشتوں کا پاس نہیں رکھتا .
اور ہمارے یہاں یہ المیہ ہے کہ سُنی,سُنائی بات کو سچ مانا جاتا ,اس پر عمل کیا جاتا اور ایک وقت آتا جب انسان ویسا ہی ہو جاتا ,جیسا اُسے  نہیں ہونا ہوتا ..
 اور ہماری سوسائٹی کا بہیت ہاتھ رہا ہے آج کی جنریشن کو مبحت کے بارے میں غلط انفارمیشن ڈیلیور کرنے میں ,
مبحت بہیت وسیع کونسیپٹ ہے , مبحت کو کسی ترازو میں نا تولا جا سکتا ہے اور نا کسی تہ خانے میں بند کیا جا سکتا ہے.
مبحت ھمارے مطابق ہمیں خود کی پہچان کرواتی ہے وہ ایسے کہ سب سے پہلے ہمیں مبحت  یہ بتاتی ہے کہ ہم کیسے انسان ہیں .
ہماری لائف میں ایسا وقت آتا ہے جب ہم یہ جان سکتے ہیں کہ کیا ہم اللہ پر یقین رکھتے ہیں . کیا ہم فرمابردار اولاد ہیں .کیا ہم رشتوں کا پاس رکھ سکتے ہیں .کیا ہم میں اپنے بڑوں سے بات کرنے کی تمیز باقی ہے .کیا ہم  اپنے ماں پاپا کے فیصلوں کو مان دے سکتے ہیں .کیا ہم اپنے مفاد سے بالا تر ہو کر دوسروں کے لیے کچھ اچھا سوچ سکتے ہیں ….
اور مبحت ہمیں دعا مانگنا بھی سیکھاتی ہے اور جب انسان اللہ پاک سے دعا مانگتا ہے تو آٹومیٹک لی خود کو خدا کے قریب پاتا ہے ❤
ایکچولی ہم خود بھی ابھی تھوڑا  ڈرتے ہیں کچھ بھی کُھل کے لکھنے سے ہمیں نہیں پتا کہ جو بات ہم بتانا چاہ رہے ہیں وہ بات بتا پا رہے ہیں یا نہیں, لیکن امید ہے کہ سمجھا جاۓ گا .☺
مبحت ہوتی کس سے ہے ؟مبحت ہمیشہ حسین سے ہوتی ہے اور لفظ ‘حسین’ کو بیان کرنے کے لیے شاہد ھمارے پاس الفاظ نہیں اور ہاں خوبصورت اور حسین ہونے میں بہیت فرق ہے.ہم نےمسٹر ہدایت عباسی سے پوچھا, تو وہ کہنے لگے” مجنوں کی لیلا حسین تھی اور ارطغرل کی حلیمہ خوبصورت “.
مبحت کو کامیاب کیسے بنایا جا سکتا ہے ؟ مبحت تاریکی نہ  رہے ,نور بن جاے , مبحت زوال نہ رہے عروج بن جاے , مبحت پستی نہ رہے بلکہ بلندی بن جاے .مبحت بیوفائی نہ رہے وفا بن جاے .مبحت رسوائ نہ رہے ادب و احترام بن جاے .مبحت درد نہ رہے دُعا  بن جاے .مبحت سختی نہ رہے شائیستگی  بن جاے .مبحت شکوہ , شکایت اور گلہ نہ رہے بلکہ یقینِ محکم ،ارادہ مصمم ،بن جاے .مبحت ہجر کی تنگی نہ رہے بلکہ وصل کا سکوں بن جاے .اسکا واحد اور یکتا حل یہ ہے کہ مبحت کسی ایسی ذات سے کی جاے جو لا محدود ہو .
وجہ : کیونکہ جب مبحت کسی محدود ذات سے جُڑ جاتی ہے ہے تو اُس مبحت سے جنم لینے والے احساسات, جذبات ,خیالات ,خطرات, تشنگی, امید حسرت, تصور, اداہیں ,نزاکتیںـں, شوخیاں ,بناوٹ, چاہتیں, اور خلوص سب کچھ   محدود ہی ہو جاتا ہے  اور  ان چیزوں پر عمل کر کے محب , محدود سے  محدود تر ہوتا چلا جاتا ہے اور مبحت ذلت و رُسوائ اور  درد و تکلیف کی طرف کار فرما ہو جاتی ہے ,اور پھر مبحت میں نہ یقین رہتا ہے ,نہ نور رہتا ہے , نہ عزت رہتی ہے اور دل احساس سے آری ہو جاتا ہے .اور اگر دنیا میں , زندگی میں , کائیات میں, سب سے پہلے مبحت کے لائق اور اہل کوئی ذات ہے تو وہ صرف اللہ ربِ زولجلال کی ذات ہے  جو وفا کا بدلہ وفا سے ,اور ایک ندامت کے آنسو پے ریت کے زرارت کے برابر , سمندر کی جھاگ کے برابر گناہوں کو معاف کر دیتا ہے یہ ہے مبحت کا کمال اور جمال . یہ ہے مبحت کی لامتناہیت  .❤

  ہم نے اپنے آس پاس موجود بلکہ اپنی کونٹیکٹ لسٹ میں موجود کچھ اپنوں سے مبحت کو اُنکے  الفاظ میں بیان کرنے کو کہا ..تو ہماری جانکاری میں اور اضافہ ہوا …☺
سب سے پہلے ماں پاپا سے پوچھا کہ آپ دونوں کی نظر میں مبحت کیا ہے :
دونوں نے ایک سا ہی جواب دیا  ;
“مبحت ھمارے والدین ہیں مبحت ایک دوسرے کے  لیے ہم دونوں ہیں اور مبحت ھماری اولاد ہے “❤❤
Mr.Hadayat Abbasi says:
” مبحت میری ماں ہے, مبحت میرا باپ ہے.
 اور مبحت ایسی غلطی ہے جو جوانی میں سٹارٹ ہوتی ہے اور ڈھلتی جوانی میں ختم  “❤
دوسری لائن . end kita jy sir 🙆
Zokha Irshad says :
“مبحت وجہِ تخلیقِ کائنات ہے”❤
Accordingly Mr.syed Yasir kazmi:
” مبحت ایک مسلسل سفر ہے جس کے کوۓ آغاز ہی اسکی منزل ہے “❤
نقطہِ آغاز ہی منزل ..👌wow
kahf o sher syeda says:
“مبحت جسموں کی نہیں روح کے رشتے کی  داستان ہے ,جہاں ساتھ رہنے سے زیادہ محبوب کی خوشی معنی رکھتی ہے ❤
According to Mr.Ashwani Joshi;
” Love is inner thought that gives you real pleasure of happiness even in vacuum of life.
Love is creation of mind for happiness and joy.Loves comes in many forms but unselfish one is real gift of God”❤
Mr.Ahmad Farhad says :
” میں تو آج تک محبت کے سامنے لب بستہ و انگشت بدنداں ہوں کہ یہ ہے کیا شے”😯 👌
ویسے سر کبھی کبھی ہم بھی سوچتے ہیں کہ یہ مبحت ہے کیا شے ؟ ☺
Laraib Minhas says:
“مبحت ایسی فیلنگ ہے جو انسان کو اسکے خدا سے ملا دیتی ہے “❤
Accordingly Ayesha Kiani:
 “Love is a feelings which we can’t describe in words it just realize priceless uncountable according to my point of view..
Mohabbat zindagi hai aur tum meri Mohabbat ho..
Tum he ho bandgi meri tm he meri
ibaddat ho”wow amazing  ……❤😍
Sharaz Abbasi says :
” پگڈ نڑی راستوں پر ننگے پاوں چلنے کا نام ھے محبت  جو بیٹھ کر پاوں کے چھالے گننے لگ جاے وہ محبت ہار جاتا ھے”❤
According to Farhat Abbasi:😚
“قفسِ روح “❤
” دل کی دہلیز پہ بیٹھا ہے وہ جابِر  بن کے
روح اک شخص میں قید ہے کسی قفس کی مانند”
Accordingly Mr.Arshad Malik :
“مبحت نارسائی کا نام ہے” .❤
سر جی بات جو دل سے نکلے اثر رکھتی ہے 👍👌
Mr.Mudasar Hafeez says ;
 “Love give us pain  in my point of view . Only one love can provide us peace that is mother love “❤
warda kiani says :
“مبحت وہ ہے جو مجھے اپنے ماں باپ سے جوڑتی ہے “❤
Uzma Awan says:
 “محبت اگر محرم کے ساتھ ہو تو پاک ۔۔ اور کامیاب⁦❣️⁩نامحرم کے ساتھ ہو تو صرف گمراہی😑”👍
Humaira Butt says :”
 ‎محبت اک خوبصورت خواب ہے کسی کو کھونا پانا  محبّت نہیـں ھوتی …محبّت تو بس محبّت ھوتی ھے … ادب ھوتا ھے … احترام ھوتا ھے … زندگی ھوتی ھے … سکون ھوتا ھے … خواہشات ھوتی ھیــــں … اور کچھ جذبات ھوتے ھیــــں .کچھ محبتیں آپ کی زندگی کا حصہ نہیں بن پاتیں وہی
آپ کی زندگی کا اثاثہ بن جاتی ہیں”.💞💞‎”❤👌
According to Mr. Usman Raza Jolaha:
“Love is sweet a sugar and honey, love is cute like a persian cat, love us prettiest thing to experience❤️

We can fall in love with anything

It can be a gender to our opposite sex, it can be nature, it can be doing anything.

Love is unconditional. First thing of falling in love with anyone or anything is we don’t see flaws or we don’t see negative points.”👌❤wow amazing.
sir 👉Persian Cat 😻❤☺
Mr.Aftab Iqbal says :
❤ 👌‎محبت میرے نزدیک مقصدِ زندگی ہے”۔‎”
الحمداللہ ☺سر خوبصورت الفاظ ❤
Shahzaib Abbasi says:
” میرے حساب سے محبت اٌس دلی کیفیت کا نام ہے جو کسی چیز کی جانب آپکو راغب کرے
وہ چیز خدا انسان کچھ بھی ہو سکتا😊”❤
Asim Alyas Rathor says:
“اپنے نشاں کو اپنے محبوب کے نشاں  میں مِٹا دینا یا فنا کر دینا مبحت ہے “❤❤
Aamna khan says:
 شاعری جو میرا یقین ہے کئی بار جی چاہتا ہے کہ یقین کی اس پوٹلی کو ہاتھ میں لے کر تنہائی کے جنگل میں جا نکلوں جہاں وحشی خوشبوؤں کا راج ہو۔۔۔ہتھیلیوں کی تقدیر بدلتی خوشبو۔۔آنکھوں کی روشنی بکھیرتی خوشبو۔۔۔۔سینوں کی محصور کرتی خوشبو۔۔۔ہونٹوں کی شعر کہتی خوشبو۔۔۔یہی خوشبو تو ہےجو محسوسات کو پتھر کر دینے والی رزق کی دوڑ میں مگن اس لڑکی کے پیروں میں حرف و معنی کی جھانجھریں ڈال دیتی ہے جن کی چھن چھن اسے اس کے ہونے کا احساس دلاتی ہے اور روح مسکرا کر پکار اٹھتی ہے۔۔۔”ہیں”…😦😦
اف کیا یہی مبحت ہے لڑکی؟ جو آپکو ہم سے ہے؟ 😉❤😁😃

ویسے حیرت میں ہیں ہم اتنا کچھ سننے, پڑھنے ,لکھنے ,سوچنے ,سمجھنے اور محسوس کرنے کے بعد بهی یہ کہنے کو دل کر رہا , کہ آخر یہ مبحت کیا بلا ہے ؟؟؟🍄
اب بس——– اور نہیں .👀…نہیں ہمیں پاگل ——نہیں ہونا …یہ کیا ہو رہا ہے ؟ہم یہ کیا بول رہے ہیں ؟
ہم زندہ ہیں, جینا چاھتے ہیں ,خوش رہنا چاھتے ہیں ,لمحوں کو یادیں نہیں ,یادگار بنانا چاھتے ہیں .خشک پتوں کی سرسراہٹ کو محسوس کرنا چاھتے ہیں 🍂🍁🍁,رنگ برنگِ پھولوں کی خوشبو کو محسوس کرنا چاھتے ہیں💐🌻🌺 , تتلیوں کو اُڑتا ہوا دیکھنا چاھتے ہیں ,بہتے ہوۓ پانی کے شور کو محسوس کرنا چاھتے ,  چاۓ کی چُسکی  بھرتے ہوے سڑو سڑو  کی آواز کو بھی محسوس کرنا چاھتے ہیں ☕
ہم گُنگُنانا چاھتے ہیں , سُر اور تال کو آپس میں ملانا چاھتے ہیں🎸🎹 . کورے کاغز پر رنگوں کو بکھیر دینا چاھتے ہیں 🎨.ہم دوبارہ سے چاکلیٹ کھانا چاھتے ہیں 🍫,نال پکوڑے وی 😓سمندر کے کنارے دیر تک بیٹھ کر ڈھلتے سورج کو دیکھنا چاھتے ہیں 🌞,قوسِ قزح کو نزديک سے دیکھنا چاھتے ہیں 🌈 ,بارش کی گرتی ھر ایک بوند کو مٹی پر پھیلتا ہوا دیکھنا چاھتے ہیں .رات میں جب آسمان میں چاند اکیلا ہو ,تب چاند سے بےشمار باتیں کرنا چاھتے ہیں 🌚 ❤چاندنی رات میں چھت پر بیٹھ کر شاعری لکھنا چاھتے ہیں ✏📔.ہم خط لکھنا چاھتے ہیں ✉😉.💌کسی اونچے پربت پر چڑ کر کسی سے کچھ کہنا چاھتے ہیں..———-💖
دنیا بھر کی سیر کو جانا چاھتے ہیں ✈.
(کوئی چلے گا ساتھ ؟😀)ـ 🙆 world tour
ارے چھوری بس کر👊 تنے ہور کوئی کام نہیں کے 😝.😁(اندر کی آواز) 🙆😛
آپی جلدی آؤ نا __ مما انتظار کر رہی ہیں …..
صباء (چھوٹی بہن) کی آواز سے سارا تسلسل ٹوٹ گیا .
———–  آ رہے ہیں……بس دو منٹ—–ہم نے یہ بولتے ہوے دوبارہ کچھ لکھنے کی کوشش کری مگر بے سود .😶
پھر کچھ نہیں لکھ سکے .
جیسے ڈھلتے سورج کی طرح الفاظ بھی دم توڑ رہے ہوں .

ہم اُس ذات کے بارے میں کچھ لکھنا چاھتے ہیں جو حسین ہے , جو مبحت کی سہی معنوں میں حقدار ہے . اور اُس ذات کے بارے میں جو اس دنیا میں سب سے حسین ہے مگر پتا نہیں کیوں ڈر لگتا ہے , لکھتے لکھتے ہاتھ رُک جاتا , ایسا لگتا جیسے کوئی غلطی نہ ہو جاۓ ,وہ ناراض نہ ہو جائیں , ہاں وہ مان بھی بہیت جلدی جاتے کیوں کہ وہ انسان تو ہیں نہیں وہ تو خدا ہیں نا ❤اللہ جی ❤
جیسے کہ ہم ہر وقفے کے بعد ایک ہی موضوع  پر کچھ الگ الگ بات کر رہے , ایک پہرا دوسرے سے مِیل نہیں کھاتا .ہم نے اپنی زندگی کو ایسا ہی پایا ہے زندگی کی کتاب میں ہر آنے والا ورق کچھ نیا ہی دکھائی دیتا ہے , جب کہ کتاب وہی ایک ھی ہے, مگر ھر آنے والا نیا صفہ کچھ نیا ہی سیکھا جاتا ہے .
کبھی ہر طرف دھوپ ہے تو کبھی سر پر ایک انجانا سا سایا ہے ,جو ہر وقت ہمیں کڑک دھوپ سے محفوظ رکھتا ہے .کبھی ہمیں اپنے مساہل بہت بڑے نظر آتے ہیں اور اگلے ہی پل کچھ ایسا ہو جاتا ہے کہ وہ ذات اپنے ہونے کا احساس دِلا جاتی ہے 💝.
حنا بٹ