محکمہ لائیو اسٹاک اینڈ فشریز کی جانب سے 6 ہیچریز کو فعال بنانا

محکمہ لائیو اسٹاک اینڈ فشریز کی جانب سے 6 ہیچریز کو فعال بنانا
اور اگلے ماہ 2 نئی ہیچریز کا افتتاح کرنا خوش آئند امر ہے۔ عبد الباری پتافی
کراچی 23 جولائی۔ صوبائی وزیر برائے محکمہ لائیو اسٹاک اینڈ فشریز انجینئر عبد الباری پتافی نے کہا ہے کہ محکمہ کے تحت صوبے میں مزید 6 ہیچریز کے فعال ہونا خوش آئند امر ہے جس سے مچھلیوں کی افزائش نسل میں قابل قدر اضافہ ہوگا جبکہ اگلے ماہ مزید 2 ہیچریز کے افتتاح سے اس کی استعداد میں مزید اضافہ ممکن ہوسکے گا۔ یہ بات انہوں نے محکمہ فشریز کے متعلق اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔ اجلاس میں سیکریٹری محکمہ لائیو اسٹاک اینڈ فشریز اعجاز مہیسر, ڈاریکٹر جنرل فشریز اور دیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔ ڈائریکٹر جنرل فشریز نے صوبائی وزیر کو بریفننگ دیتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ سال 6 ہیچریز کو فعال بنانا گیا جس سے کل فعال ہیچریز کی تعداد 8 ہوگی ہے جبکہ اگلے ماہ مزید 2 ہیچریز کا افتتاح کیا جائے گا جس میں سے ایک سکھر جبکہ دوسری سانگھڑ میں واقع ہے اس طرح اگلے ماہ سے پورے صوبے میں 10 ہیچریز کام کرنے لگے گی۔ بریفننگ دیتے ہوئے مزید بتایا کہ 2 کروڑ سے زائد مچھلی کے بچے کینجھر , منچھر اور دیگر جھیلوں میں چھوڑے گئے ہیں۔ انہوں نے صوبائی وزیر کو مزید بتایا کہ فشریز ڈائریکٹوریٹ نے جولائی کے مہینے میں ممنوع مچھلی اور چھینگو کے شکار پر لاگو پابندی پر سختی سے عمل درآمد کروایا گیا۔ عبد الباری پتافی نے کہا کہ محکمہ کے تحت جاری مختلف ترقیاتی اسکیموں کو جلد از جلد مکمل کیا جائے۔ اس موقع پر موجود محکمہ ورک اینڈ سروس کے متعلقہ افسران کو ہدایت جاری کیں کہ اس ضمن میں کسی بھی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔
ہینڈ آﺅ ٹ نمبر 533 (ایف زیڈ ایف)