سندھ ہائیکورٹ نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ پر سیکرٹری پٹرولیم، سیکرٹری خزانہ، چیئرمین اوگرا اور ایف بی آر کو نوٹس جاری کر دئیے

سندھ ہائیکورٹ نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ پر سیکرٹری پٹرولیم سیکرٹری خزانہ چیئرمین اوگرا اور ایف بی آر کو نوٹس جاری کر دیے۔ ہائی کورٹ میں مولوی اقبال حیدر نے آئینی درخواست دائر کرتے ہوئے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 6 اشاریہ 75 فیصد اضافے کو چیلنج کیا تھا۔ قیمتوں میں اضافہ آئین کی خلاف ورزی ہے، حکومت پارلیمنٹ کی منظوری کے بغیر قیمتوں میں اضافہ نہیں کرسکتی۔ موجودہ حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کرکےآئین کےآرٹیکل77کی خلاف ورزی کی ہے۔ حکومت کوحکم دیاجائے کہ قیمتوں میں اضافہ واپس لیاجائے، درخواست میں موقف۔ موجودہ حکومت نےصوابدیدی اختیارات استعمال کرکےعوام پرظلم کیا ہے، سندھ ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ نے نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت آئندہ تاریخ تک ملتوی کردی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں