حکومت کی ادویہ ساز کمپنیوں کو ادویات کی قیمتوں میں 7 سے 10 فیصد اضافہ کرنے کی اجازت

اسلام آباد : حکومت نے ادویہ ساز کمپنیوں کو ادویات کی قیمتوں میں 7 سے 10 فیصد اضافہ کرنے کی اجازت دے دی ہے۔

حکومت نے کنزیومر پرائس انڈیکس (سی پی آئی) کے تحت ادویہ ساز کمپنیوں کو ادویات کی قیمتوں میں 7 سے 10 فیصد اضافہ کرنے کی اجازت دے دی ہے۔

ڈریپ نے اس ضمن میں باضابطہ ڈرگ پرائسنگ پالیسی میں ترمیم منظور کرتے ہوئے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔ ڈریپ نے پالیسی میں ترمیم وفاقی حکومت و ڈریپ کی پالیسی بورڈ کی منظوری و سفارش پر کردی ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق گزشتہ برس، کنزیومر پرائس انڈیکس (سی پی آئی) کے مطابق بنیادی ادویات کی قیمتوں میں 5.14 فیصد کی اجازت دی تھی، دیگر تمام ادویات کی قیمتوں میں 7.3410 فیصد اضافہ کی اجازت دی تھی۔

ادویہ ساز کمپنیاں و امپوپرٹرز کیلئے لازم ہوگا کہ وہ کسی بھی دواء کی میکسیمم ریٹیل پرائس میں اضافے کا تمام ثبوتوں اور کمپنی کے سی ای او کے دستخطوں کے ساتھ ڈریپ میں جمع کرائے۔ ایسا نہ کرنے والے ادویہ ساز کمپنیاں و امپوپرٹرز کی نئی قیمتوں کو تسلیم نہیں کیا جائے گا۔

تمام پیش کردہ ثبوت درست ہونے کی صورت میں 30 یوم کے اندر نئی قیمتیں مقرر کرنے کی منظوری دی جائےگي