حکومت سندھ نے پلاننگ کے تحت شہر کراچی کو پستی کی طرف دھکیلنے کے لیے کوئی کثر نہیں چھوڑی۔ طاہر ملک

شہر کی ترقی اور نظام کو بہتر بنانے کیلئے مختص کیا جانے والا فنڈ حکومت سندھ کی کرپٹ اشرافیہ اور وزراء کی جیبوں میں جاتا ہے۔طاہر ملک

پیپلز پارٹی کی حکومت صوبے کے تمام اداروں اور خزانے کو دیمک کی طرح چاٹ رہی ہے۔ صوبے کا نظام پوری طرح کھوکھلا ہو چکا ہے۔طاہر ملک

کراچی، 15 جولائی: پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما طاہر ملک نے کہا ہے کہ محکمہ موسمیات کی جانب سے ایک بار پھر شہر میں تیز بارشوں کی پیشگوئی کے باوجود حکومت سندھ کی جانب سے ایک بار پھر غیر سنجیدگی کا اظہار کیا جارہا ہے۔ محکمہ بلدیات نے مون سون کے پہلے اسپیل کے بعد بھی شہر میں برساتی نالوں کی صفائی اور بارش کے پانی کی نکاسی کے لئے کسی قسم کے اقدامات نہیں کئے۔ اپنے جاری کردہ بیان میں طاہر ملک نے مزید کہا کہ بروقت اقدامات نہ ہونے اور سندھ حکومت کی نااہلی اور ہٹ دھرمی کی وجہ سے ایک بار پھر شہر کے عوام مشکلات سے دوچار ہوں گے۔ ایک طرف شہری حکومت سندھ کی نا اہلی سے تنگ ہیں تو دوسری طرف بلدیاتی اداروں کی ناقص کارکردگی نے شہریوں کو دوہری اذیت میں مبتلا کیا ہوا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت سندھ نے پلاننگ کے تحت شہر کراچی کو پستی کی طرف دھکیلنے کے لیے کوئی کثر نہیں چھوڑی۔ دنیا کے بڑے شہروں میں شمار ہونے والا پاکستان کا سب سے بڑے شہر کراچی کی سڑکیں بارش ہوتے ہی دریا کا منظر پیش کرنے لگتی ہیں۔ شہر کی ترقی اور نظام کو بہتر بنانے کیلئے مختص کیا جانے والا فنڈ حکومت سندھ کی کرپٹ اشرافیہ اور وزراء کی جیبوں میں جاتا ہے۔ پیپلز پارٹی کے وزراء صرف ٹی وی پر آکر بیان بازی کرنا جانتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت صوبے کے تمام اداروں اور خزانے کو دیمک کی طرح چاٹ رہی ہے۔ صوبے کا نظام پوری طرح کھوکھلا ہو چکا ہے۔