رکن سندھ اسمبلی و امیر جماعت اسلامی جنوبی کراچی سید عبدالرشید کا لیاری جنرل اسپتال میں نرسنگ اسٹاف پر تشدد کے واقع پر برہمی کا اظہار

لیاری جنرل اسپتال میں کسی قسم کی غنڈہ گردی برداشت نہیں کریں گے، سید عبدالرشید

اسپتال کے ایم ایس کو یرغمال بنا دھمکیاں دے کر زبردستی غیر قانونی فیصلے کروائے جا رہے ہیں ، سید عبدالرشید

سیاسی ایماء پر اسپتال کے معاملات کو خراب کیا جارہا ہے ، سید عبدالرشید

کرپٹ اور راشی اے ایم ایس لیاری جنرل اسپتال امیر میمن کو فوری برطرف کیا جائے ، سید عبدالرشید

لیاری جنرل اسپتال کی بحالی کی دن رات کوششوں میں لگا ہوں کرپٹ افراد اپنی دکانیں بند ہونے کے خوف میں غنڈہ گردی پر اتر آئے ہیں، سید عبدالرشید

خواتین نرسنگ اسٹاف پر گزشتہ دنوں بھی تشدد کیا گیا تھا جس کی سخت الفاظ میں مذمت کرتا ہوں ، سید عبدالرشید

اسپتال میں صرف علاج ہوگا سیاست ، غنڈہ راج اور کرپشن راج نہیں چلنے دیں گے ، سید عبدالرشید

وزیر اعلیٰ سندھ و وزیر صحت فوری واقع کا نوٹس لیں اور غنڈہ گردی میں ملوث افراد کو برطرف کریں ، سید عبدالرشید

لیاری جنرل اسپتال کی ساخت کو دوبارہ خراب کرنے کی کوشش کی جارہی ہے تاکہ کوئی ڈاکٹر یہاں باہر سے نہ آئے اور کرپشن کا بازار گرم رہے ، سید عبدالرشید

اسپتال کی ترقی کی راہ میں جو بھی رکاوٹ بنا اس کے خلاف بھر پور احتجاج کریں گے، سید عبدالرشید۔

غنڈہ گردی میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی نہ کی گئی تو نرسنگ اسٹاف کو خود تحفظ فراہم کرونگا اور انکے ساتھ ہر جگہ احتجاج میں شریک رہونگا ، سید عبدالرشید

ٹرانسفر کر کے ڈرانے دھمکانے کا سلسلہ اب نہیں چلے گا ، سید عبدالرشید

اسپتال میں وہی آئے گا جو اسپتال کی ترقی اور عوام کو صحت کی سہولیات فراہم کرنے میں اپنا کردار ادا کرے گا ، سید عبدالرشید۔

جاری کردہ
میڈیا سیل ایم پی اے
پی ایس 108