ہراسانی سے متعلق پڑھانے پر بہت اعتراض کیا گیا، شہزاد رائے

معروف گلوکار اور سماجی شخصیت شہزاد رائے کہتے ہیں کہ بچوں کو ہراسانی سے متعلق پڑھانا شروع کیا تو بہت اعتراض کیا گیا۔

لاہور کے نجی اسکول میں طالبات کو جنسی ہراسانی کا نشانہ بنانے کے معاملے پر معروف گلوکار اور سماجی شخصیت شہزاد رائے نے اظہارِ خیال کیا ہے
انہوں نے کہا کہ جو ہم پڑھا رہے ہیں، اگر یہ تمام ملک کے نصاب میں شامل ہو تو اس کے بہت اچھے نتائج سامنے آئیں گے۔

شہزاد رائے کا مزید کہنا ہے کہ اسکولوں کے اندر بچوں کو اس حوالے سے آگاہی دی جانی چاہیے، جبکہ کونسلر کا ہونا بھی ضروری ہے۔

گلوکار اور سماجی رہنما کا یہ بھی کہنا ہے کہ اسکولوں میں جنسی ہراسانی کے واقعات روکنے کے لیے آگاہی دینی بہت ضروری ہے۔
واضح رہے کہ 1 روز قبل ’جیو نیوز‘ پر خبر نشر ہوئی تھی جس میں انکشاف کیا گیا تھا کہ لاہور کے معروف نجی اسکولوں میں طالبات کو جنسی ہراساں کیا جا رہا ہے۔

اس خبر کا وزیرِ اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار، وفاقی وزیر شیریں مزاری اور دیگر اعلیٰ حکام کی جانب سے نوٹس لیا گیا تھا