وفاقی حکومت نے لوگوں کو اتنا تباہ کردیا ہے کہ اب یہ خود بھی پریشان ہوگئے ہیں ٹڈی دل صرف کسانوں کا مسئلہ نہیں ہےفاقی حکومت نے لوگوں کو اتنا تباہ کردیا ہے کہ اب یہ خود بھی پریشان ہوگئے ہیں ٹڈی دل صرف کسانوں کا مسئلہ نہیں ہے

وزیر اعلی سندھوفاقی حکومت نے لوگوں کو اتنا تباہ کردیا ہے کہ اب یہ خود بھی پریشان ہوگئے ہیں ٹڈی دل صرف کسانوں کا مسئلہ نہیں ہے نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت نے لوگوں کو اتنا تباہ کردیا ہے کہ اب یہ خود بھی پریشان ہوگئے ہیں ٹڈی دل صرف کسانوں کا مسئلہ نہیں ہے یہ فوڈ سیکورٹی کا مسئلہ ہے مگر وفاقی حکومت کرونا کی طرح اس پر بھی سنجیدہ نہیں ۔ایک وفاقی وزیر نے کہا ہے کہ ٹڈی دل کا ایسے مقابلہ کرینگے جیسے کورونا کا کیاتھایہ سن کر ٹڈی دل میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو سندھ اسمبلی میں پیپلز پارٹی کے رکن صوبائی اسمبلی ذوالفقار شاہ کی ٹڈی دل سے متعلق تحریک التوا پر پالیسی بیان دیتے ہوئے کیا۔وزیر اعلی سندھ نے کراچی میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج کی عمارت پر دہشت گردوں کے حملے سے متعلق بھی ایوان کو اعتماد میں لیا اور بتایا کہ چار دہشت گردوں نے حملہ کیا۔ہم نے وہاں ریپڈ فورس تعینات کی ہوئی تھی۔ہمارا ایک پولیس والا شہید ہوا ۔آگے جاکر ایک اور دہشت گرد کو مارا۔ایک دہشت گرد پارکنگ تک پہنچا تھا وہ وہاں مار گیاا۔ سپاہی شاہد نے جام شہادت نوش کیا۔ تین پولیس کانسٹیبل زخمی ہوئے جبکہ دو اور سیکورٹی گارڈ زخمی ہیں واقعہ میںدو عام شہری زخمی ہوئے ہیں۔مراد علی شااہ نے اپنے خطاب میں یہ اہم اعلان کیا کہ اب ہم اب وفاق کے لیے ٹیکس جمع نہیں کرینگے ۔انہوں نے کہا کہ میں نے وزیر ایکسائز کو کہاہے کہ ٹیکس جمع نہ کرنے سے متعلق وفاقی حکومت کو آگاہ کردیں وفاق نے ہمیں آئین کے تحت ٹیکس جمع کرنے کا اختیار دیاہے وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ ٹڈی دل گلوبل مسئلہ ہے اور اس کی اگلی لہر جولائی میں ایران سے آنی ہے ۔انہوں نے کہا کہ ٹڈی دل سے متعلق قومی ایکشن پلان کیا وزیر اعلیٰ نے بنایاہے؟ ان کا کہنا تھا کہ بڑی باتیں کی جاتی ہیں کہ سندھ حکومت نے گاڑیاں خرید لی ہیں۔اب پیٹرولیم مصنوعات کا بم گرایاگیاہے اور ظلم کی انتہا کردی گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ پیٹرولیم لیوی غیر آئینی ہے۔انہوں نے کہا کہ حفیظ شیخ کو میں نے خود کہاکہ ہم لوگوں پر بوجھ نہیں ڈالیں گے ۔وفاقی حکومت لوگوں کو بالکل دفن کردیناہ چاہتی ہے کیا، سب کو یاد ہے کہ یہ کس نے کہا تھا کہ سب سے زیادہ سکون کہاں ملتا ہے۔ مراد علی شاہ نے کہا کہ قومی ایکشن پلان میں کہاگیاہے کہ ہر چیز این ڈی ایم اے کودیدی گئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پلانٹ پروٹیکشن ڈپارٹمنٹ نے کچھ نہیں کرنا کیا؟ٹڈی دل صر ف ہماری ذمہ داری ہے کیا؟ انہوں نے کہا کہ میں نے گزشتہ روز این ڈی ایم اے کا ذکر کردیاتھا وفاقی حکومت لوگوں کو اتنا تباہ کردیاہے کہ اب خود پریشان ہیں۔کل ایک عشائیہ میں پکڑ دھکڑ کر کر لوگوں کو جمع کیا گیا جو دوسروں کو یہ مشورہ دیا کرتے تھے کہ گھبرانا نہیں ہے اب یہ خود گھبرانا شروع ہوگئے ہیں۔وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ : اس وقت تک ٹڈی دل سے متعلق گیارہ سو شکایات کا ازالہ کرچکے ہیں،ہم تعلقہ سطح تک ٹڈی دل کی صورتحال کو مانیٹر کررہے ہیں۔ٹڈی دل کا بریڈنگ گراونڈ صحرائی علاقوں میں ہے ۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وزیراعظم نے مارچ میں کہاتھا کہ ٹڈی دل کے لئے چھ جہاز دینگے ،پہلے تو ٹڈی دل سے نمٹنے کے لئے جہاز نہیں تھے ۔اب جدید ٹیکنالوجی ہے جہاز سے بھی فضائی اسپرے ہوتاہے ۔انہوں نے ہا کہ کہا گیاہے کہ ہم صحرائی علاقوں میں ٹریکٹر چلادیں گے ،سوچیں یہ انکی حکمت عملی ہے۔انہوں نے کہا کہ ٹڈی دل صرف کسانوں کا مسئلہ نہیں ہے یہ فوڈ سیکورٹی کا مسئلہ ہے۔ یہ کرونا کی طرح اس پر بھی سنجیدہ نہیں ہیں۔ایک وفاقی وزیر نے کہا کہ ٹڈی دل کا ایسے مقابلہ کرینگے جیسے کورونا کا کیاتھا۔یہ سن کر ٹڈی دل میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے انہوں نے کہا کہ خدارا لوگوں کا اور اس ملک کا کچھ توخیال کریں ،حفیظ شیخ نے کہاتھا کہ عالمی مارکیٹ میں آئل پرائس بڑھیں تو ہم لیوی کم کردینگے ،جیسے ہی پیٹرولیم مصنوعات کی قیمت بڑھی مارکیٹ میں پیٹرول آگیا۔وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ اس ملک کے عوام اب موجودہ حکومت سے بیزار ہوچکے ہیں اور اب اسے مزید برداشت نہیں کریں گے۔انہوں نے کہا ہ جب ہم سچ بات کرتے ہیں اور انہیں آئینہ دکھایا جاتا ہے تو ہمارے لیے بار بار کہا جاتاہے کہ آرٹیکل 149لگادو۔اب باتوں سے ہم پریشا ن ہونے والے نہیںسندھ حکومت اپنے صوبے کے عوام کے مفاد میں ہر اقدام اٹھائے گی۔انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ میں صوبائی حکومتوں نے غلط بیانی کی ،ہم سپریم کورٹ میں پانچ سال کا ریکارڈ لیکر جائیں گے ۔دیگرصوبائی حکومتوں نے سپریم کورٹ میں غلط بیانی کی جو توہین عدالت ہ کے زمرے میںآتی ہے۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ غلط بیانی عدالتی فیصلے میں ریکارڈ ہوئی ہے کورونا کے سال میں خیبرپختونخواہ میں ڈھائی ارب روپے کی گاڑیاں خریدی گئیں۔انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ کھاتے سندھ کا ہیں مگر یہاں کی برائیاں کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت اپنی ذمہ داریاں سنبھالے ہم ٹڈی دل کے مسئلہ پر آخری حد تک جو ممکن ہوا کام کریں گے۔انہوں نے کہا کہ اپنے صوبے کے لوگوں کو یقین دلاتاہوں کہ ہم اپنے لوگوں کےساتھ کھڑے ہیں اور ہم اپنے عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔