کوویڈ 19 نے مزید 74 مریضوں کی جان لی اور 1539 دیگر افراد کو متاثر کیا ہے، وزیراعلیٰ سندھ

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کی ہلاکتیں بتدریج بڑھتے ہوئے 1343 تک پہنچ گئی ہے جس میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 74 مزید جان بحق ہونے والے افراد بھی شامل ہیں جبکہ 8464 ٹیسٹ کرنے سے 1539 مثبت کیسز سامنے آئے۔ وزیراعلیٰ ہاؤس سے جاری ایک بیان میں مراد علی شاہ نے بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں 74 مزید مریضوں کی ہلاکتوں کے بعد تعداد 1343 ہوگئی ہے۔ 19 مارچ کو COVID-19 سے ہونے والی پہلی ہلاکت کے بعد یہ اب تک کی سب سے بلند اعداد و شمار ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اموات کا تناسب 1.5 فیصد سے بڑھ کر 1.6 فیصد ہو گیا ہے جس پر وہ بہت رنجیدہ ہیں اور انہوں نے سوگوار خاندانوں سے تعزیت کا اظہار بھی کیا ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ8464ٹیسٹ کئے گئے جن سے کورونا کے 1539 نئے کیسز کا پتہ چلا ہے جو کہ 19.6 فیصد تشخیصی شرح ہے۔ حکومت نے اب تک 443757 ٹیسٹ کروائے ہیں جن میں سے 81985 کیسز کا پتہ چلا ہے ان میں سے 45616 مریض صحتیاب ہوگئے ہیں جن میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 1093 شامل ہیں۔ انہوں نے کہا بحالی کی شرح 55.6 فیصد پر آگئی ہے جو کافی حوصلہ افزا ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق اس وقت 35026 مریض زیر علاج ہیں ان میں سے 33382 گھر وںمیں ، 88 قرنطینہ مراکز میں اور 1456 مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ مراد علی شاہ نے بتایا کہ اس وقت 660 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے ان میں سے 92 کو وینٹیلیٹرز پر منتقل کیا گیا ہے۔ ضلعی سطح پر کیسز سے متعلق وزیراعلیٰ سندھ نے بتایا کہ 1539 نئے کیسوں میں سے کراچی میں 689 کیسز ہیں ان میں ضلع شرقی 252 ، ضلع جنوبی 175 ، ضلع وسطی 107 ، ضلع ملیر 62 ، ضلع غربی 49 اور ضلع کورنگی 44 شامل ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ حیدرآباد میں 93 ، گھوٹکی 76 ، سکھر 74 ، میرپورخاص 34 ، خیرپور 34 ، ٹنڈو الہیار 32 ، سانگھڑ 23 ، شہید بینظیر آباد 23 ، جیکب آباد 28 ، لاڑکانہ 22 ، قمبر 19 ، شکار پور 19 ، دادو 13 ، عمرکوٹ 12 ، بدین اور نوشہروفیروز 9-9، سجاول 6، ٹنڈو محمد خان 5، ٹھٹھہ 4اور کشمور اور مٹیاری 1-1 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے صوبے کے عوام پر زور دیا کہ وہ ایس او پیز پر عمل کریں تاکہ وبائی بیماری کو مزید بڑھنے سے روکا جاسکے۔
عبدالرشید چنا
میڈیا کنسلٹنٹ وزیراعلیٰ سندھ