گورنرسندھ کا شہر میں جاری غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ پر اظہار برہمی یہ شہریوں کے ساتھ سخت نا انصافی کے مترادف ہے،گورنر سندھ ،کے الیکٹرک کو صورتحال کو فوری بہتر بنانے کی ہدایت

گورنرسندھ عمران اسماعیل سے چیف ایگزیکٹو آفیسر کے الیکٹرک مونس عبداللہ علوی نے گورنرہاﺅس میں ملاقات کی۔ گورنر سندھ نے ملاقات کے دوران کے الیکٹرک کی جانب سے شہر میں جاری غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ پر سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کراچی کے شہریوں کے ساتھ سخت نا انصافی کے مترادف ہے۔ گورنر سندھ نے سی ای او کے الیکٹرک کو ہدایت کی کہ صورتحال کا تدارک کرکے شہریوں کو جلد از ریلیف دیا جائے۔ گورنر سندھ نے مزید کہا کہ وفاق کی جانب سے کے الیکٹرک کو اضافی گیس مہیا کی جارہی ہے، اس کے باوجود اس طرح کی صورتحال کا پیدا ہو نا تشویش ناک ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ کے الیکٹرک کو اضافی فرنس آئل حبکو سے مہیا کیا جائے گا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ وفاق کے الیکٹرک کو 650 میگا واٹ بجلی فراہم کرنے کا پابند ہے جبکہ کراچی کے شہریوں کی سہولت کے لئے وفاق اضافی 500 میگا واٹ بجلی دینے کو تیار ہے لیکن سسٹم میں سرمایہ نہ لگانے کی وجہ سے کے الیکٹرک کے پاس 500 میگا واٹ اضافی بجلی سنبھالنے کی صلاحیت نہیں ہے ۔ سی ای او کے الیکٹرک مونس عبداللہ علوی نے کہا کہ فرنس آئل کی کمی کی وجہ سے ٹپال اور گ±ل احمد پاور پلانٹ بند ہیں جبکہ وفاق سے اضافی فرنس آئل ملنے سے بجلی کے بحران پر قابو پانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے یقین دلایا کہ لوڈ شیڈنگ میں اگلے چوبیس گھنٹوں میں بہتری آجائے گی اور اگلے 48 گھنٹوں میں لوڈ شیڈنگ کے بحران پر قابو پالیا جائے گا۔