میگھن اور ہیری کا امریکی ادارے کے ساتھ بطور ماڈریٹر معاہدہ

شہزادہ ہیری اور ان کی اہلیہ میگھن مارکل نے شاہی خاندان سے علیحدگی کے بعد امریکا میں ہیری واکر ایجنسی کے ساتھ ایک اہم معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔

لاس اینجلس ٹائمز کے مطابق سابق شاہی جوڑا نے ایک اسپیکنگ انگیجمنٹ کے معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔ یاد رہے کہ اس ایجنسی کے ساتھ سابق امریکی صدر بارک اوباما انکی اہلیہ مشیل اوباما، سابق صدر بل کلنٹن، انکی اہلیہ اور سابق امریکی وزیرخارجہ ہلیری کلنٹن بھی اس ایجنسی کے ساتھ منسلک ہیں۔

اس معاہدے کے تحت شہزادہ ہیری اور میگن مارکل بطور ماڈریٹر مباحثوں میں شرکت اور کلیدی تقاریر کرینگے، جبکہ وہ تجارتی تنظیموں، کارپوریشنز اور کمیونٹی فورمز سے بھی ارتباط کرینگے اور نسلی انصاف، صنفی مساوات، ماحولیاتی مسائل اور ذہنی صحت پر بھی کام کرینگے۔

اس نئے معاہدے سے اس جوڑے کے دوبارہ پبلک سروس میں واپسی ہوئی ہے، جہاں یہ دونوں آخری بار اس سال مارچ میں اس وقت نظر آئے تھے جب ویسٹ منسٹر ایبے میں کامن ویلتھ ڈے سروس کی تقریب ہوئی تھی۔

اگرچہ شہزادہ ہیری اور میگھن خاندان سے الگ ہونے کے بعد لاس اینجلس منتقل ہوچکے ہیں لیکن اسکے باوجود دونوں لندن میں ہونے والے مختلف انسانی فلاح وبہبود کے کاموں میں اب بھی سرگرم رہتے ہیں۔

اس ماہ کے اوائل میں اس جوڑے نے لندن میں ایک خیراتی ادارے اسٹریٹ گیمز کو ایک خط تحریر کیا (یہ خیراتی ادارہ جو کہ ہب کمیونٹی کچن چلاتا ہے اور اس نے عالمی وبا کورونا وائرس کے دوران لندن بھر میں ضروت مند نوجوانوں کو تازہ کھانا فراہم کیا)، شہزادہ ہیری اور انکی اہلیہ اس ادارے کی بھی مدد کرتے ہیں۔

ایک ذریعہ نے امریکی ہفت روزہ کو انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ شہزادہ ہیری اور میگھن کی اب اولین ترجیح کورونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی مدد کرنا ہے اس میں بھی انکی ترجیح کمزور طبقات ہیں۔