بریگیڈیئر اسد منیر کی خودکشی یا قتل کے حوالے سے عامر خان کی ویڈیو ک چرچا

ممتاز دفاعی تجزیہ نگار بریگیڈیئر ریٹائرڈ اسد منیر کی موت کے حوالے سے ابھی تک سیاسی حلقوں میں بحث جاری ہے کہ یہ صرف خودکشی ہے یا کچھ اور۔ سوشل میڈیا پر بھی تبصرے جاری ہیں اور بھارتی فلم اسٹار عامر خان کی ایک فلم کا ویڈیو کلپ اسی مناسبت سے بہت مشہور ہو گیا ہے جس میں ایک واقعہ کے حوالے سے عامر خان کہہ رہے ہیں کہ یہ معاملہ صرف خودکشی نہیں بلکہ قتل کا ہے کیونکہ ذہنی دباؤ کو ناپنے والا کوئی آلہ ایجاد نہیں کیا گیا اگر ذہنی دباؤ کو ناپنے کا کوئی آلہ ایجاد ہو جاتا ہے تو پتہ چل جاتا ہے کہ یہ خودکشی نہیں قتل ہے۔
بریگیڈیئر ریٹائرڈ اسد منیر نے نیب کی تحقیقات سے دلبرداشتہ ہو کر خود کشی کی۔ ایسا ان کی موت کے موقع پر ان کے گھر سے ملنے والے اس خط کو بنیاد بناکر کہا گیا جس کے بارے میں ان کے بھائی نے بھی تصدیق کی کہ یہ انہوں نے خود ٹائپ کیا ہے اور اس پر اسد منیر کی اپنی ہینڈرائٹنگ بھی موجود ہے۔ لیکن سوال اٹھانے والوں نے یہ نکتہ بھی اٹھایا ہے کہ اسد منیر جیسے تجزیہ نگار کو کیا یہ معلوم نہیں تھا کہ ثاقب نثار ریٹائر ہو چکے ہیں اور ان کی جگہ نئے چیف جسٹس سپریم کورٹ میں آچکے ہیں پھر لیٹر کے اوپر سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کا نام کیوں لکھا گیا اور دستخط کیوں نہیں کئے گئے۔ اس معاملے پر سپریم کورٹ انکوائری کا حکم دے چکی ہے اور اس معاملے کی انکوائری آنے پر ہی حقائق سامنے آئیں گے کہ آیا یہ خودکشی تھی یا کچھ اور سیاسی حلقوں میں بالخصوص پاکستان پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت یہ کہہ چکی ہے کہ یہ خون نیب کی گردن پر ہے۔ سینئر تجزیہ نگار اور صحافی بھی یہ بات کہتے ہیں کہ یہ خودکشی ہی نہیں بلکہ یہ نیب کے خلاف ایف آئی آر ہے جو کسی نہ کسی وقت رنگ دکھائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں