کل سے بین الاقوامی پروازوں کیلئے فضائی حدود محدود پیمانے پر کھولیں گے: وزیراعظم

ویب سائٹ ٹویٹر پراپنے پیغام میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ کل سے ہم بین الاقوامی پروازوں کے لیےفضائی حدودمحدود پیمانے پر کھول رہے ہیں۔ یہ اقدام خصوصی طور پر ہمارے بیرونِ ملک کام کرنے والے ہم وطنوں کے لیے کیا جا رہا ہے۔ وبا کے دوران سمندر پار پاکستانیوں نے سب سے زیادہ مشکلات برداشت کیں۔ سمندر پار پاکستانیوں کی ہمت اور حوصلے پر ہمیں فخر ہے ، وطن واپس آنے والے پاکستانیوں کو خوش آمدید کہتے ہیں، سمندرپار پاکستانیوں کو واپسی پر ہر قسم کی سہولت فراہم کریں گے

وزیراعظم نے مزید کہا کہ کورونا کے باعث دیار غیر میں مشکلات کا شکار پاکستانیوں کی مدد قابل ستائش ہے، ضرورتمندوں کی مدد کرکے پاکستانی کمیونٹی کئی بار لوگوں کے لیے متاثر کن کردارادا کیا ہے
واضح رہے کہ اس سے قبل ملک بھر میں بین الاقوامی فضائی آپریشن بحال کرنے کےلیے سول ایوی ایشن نے نوٹم جاری کیا تھا ۔وفاقی حکومت کی جانب سے کلیئرنس ملنے کے بعد سول ایوی ایشن اتھارٹی نے نوٹم جاری کیا جس کے تحت مسافر طیاروں کے علاوہ چارٹرڈ اور کارگو پروازیں بھی بین الاقوامی ایئرپورٹس سے اڑان بھر سکیں گی۔
پی آئی اے سمیت تمام ملکی اور غیرملکی ایئرلائنز اب اپنے مسافر پاکستان لا اور لیجاسکیں گی۔ تاہم گوادر اور تربت کے لیے پروازوں پر پابندی بدستور برقرار رہے گی، اس سے پہلے غیرملکی ایئرلائنز کو صرف پاکستان سے مسافروں کو لے جانے کی اجازت تھی۔۔پروازوں کی مذکورہ اوقات کار میں آمدورفت اتھارٹی کے ایس او پیز کے تحت ہوگی، نوٹم کے مطابق کارگو پروازوں سمیت خصوصی اور ڈپلومیٹک پروازوں کی آمدورفت کا سلسلہ خصوصی اجازت کے تحت جاری رہے گا

Courtesy gnn news