کیس ہار جیت کا تھا ہی نہیں، فروغ نسیم کا ردعمل

سابق وزیر قانون اور وفاق کے وکیل بیرسٹر فروغ نسیم نے صدارتی ریفرنس کالعدم قرار دیے جانے پر ردعمل کا اظہا رکردیا ہے۔

سپریم کورٹ نے آج جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف صدارتی ریفرنس کالعدم قرار دیا۔

عدالت عظمیٰ کے فیصلے پر وفاق کے وکیل بیرسٹر فروغ نسیم نے مختصر ردعمل کا اظہار کیا۔

انہوں نے عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو میں صرف اتنا کہنے پر ہی اکتفا کیا کہ ’یہ کیس ہار جیت کا تھا ہی نہیں‘۔

دوسری جانب میڈیا بریفنگ میں وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے امور داخلہ اور احتساب شہزاد اکبر نے کہاکہ سپریم کورٹ کا آج فیصلہ بہت اہم ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ معزز جج صاحب کی فیملی کو منی ٹریل ایف بی آر کو دینا ہو گی، سپریم کورٹ کا فیصلہ کسی کی جیت اور ہار نہیں ہے۔

شہزاد اکبر نے یہ بھی کہا کہ حکومت اس فیصلے سے مطمئن ہے، یہ بہت احسن فیصلہ ہے، تحریک انصاف کے قائد عمران خان اور وکیل کی حیثیت سے میرے دل میں عدلیہ کی عزت اور آزادی مقدم ہے، آئین کی سربلندی کے لیے ضروری ہے کہ عدلیہ، مقننہ اور انتظامیہ آزاد ہے