وزیر اعلی ہاوس کے سامنے کوئٹہ انتظامیہ نے  اپوزیشن جماعتوں کے اراکین کا استحقاق مجروح کیا ، اپوزیشن اراکین بلوچستان اسمبلی

کوئٹہ ۔ وزیر اعلی ہاوس کے سامنے کوئٹہ انتظامیہ نے  اپوزیشن جماعتوں کے اراکین کا استحقاق مجروح کیا ، اپوزیشن اراکین بلوچستان اسمبلی 

کوئٹہ ۔ پرامن احتجاج میں شامل اراکین صوبائی اسمبلی کا پانی اور اشیاء خوردونوش انتظامیہ نے ضبط کرلیں ، ایم پی اے احمد نواز بلوچ 

کوئٹہ ۔ نیچے بیٹھنے کے لیے بچھائی جانے والی فرشی دریاں اور قناتیں انتظامیہ نے چھین لیں ، اپوزیشن اراکین 

کوئٹہ۔ حکومت بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی،  انتظامیہ کو اپوزیشن اراکین کا استحقاق مجروح کرنے کا ٹاسک دیا گیا،  اپوزیشن رکن 

کوئٹہ ۔ پرامن احتجاج  عوام تک دکھانے کے لیے میڈیا کی  احتجاج تک رسائی روک دی گئی،  صدر بی این پی کوئٹہ ایم پی اے احمد نواز بلوچ 

کوئٹہ،  حکومت حقائق کا سامنا کرنے سے قاصر ہے اپوزیشن احتجاج جاری رکھے گی ، اپوزیشن اراکین 

کوئٹہ۔ اپوزیشن اراکین کو مکمل محصور کرکے کھانا اور پانی بند کردیا گیا،  ایم پی اے میر احمد نواز بلوچ 

کوئٹہ،  اپوزیشن کے کسی بھی رکن کی حالت غیر ہوئی تو ذمہ داری صوبائی حکومت پر عائد ہوگی ، اپوزیشن اراکین 

کوئٹہ،  عوامی خواہشات و ضروریات کے برعکس کوئی بھی بجٹ تجاویز وسائل کا ضیاع اور اپوزیشن کے لیے  ناقابل قبول ہے ،  ایم پی اے شکیلہ نوید دہوار

کوئٹہ،  اپوزیشن کا پرامن احتجاج سبوتاژ کرنے کے لیے انتظامیہ کو اکسایا گیا تاہم اپوزیشن نے صبر و تحمل کا مظاہرہ کیا،  ایم پی اے شکیلہ نوید دہوار 

کوئٹہ،  حکومت کے پاس اپوزیشن کا سامنا کرنے کے لیے کوئی دلائل نہیں،  اپوزیشن اراکین سے پانی اور اشیاء خوردونوش تک چھین لی گئی ایم پی اے شکیلہ نوید دہوار 

کوئٹہ،  حکومت کے اخلاقی اقدار کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ اپوزیشن کی خواتین اراکین کا بھی کوئی لحاظ نہیں رکھا گیا ایم پی اے شکیلہ نوید دہوار 

کوئٹہ، شدید  گرمی میں بغیر پانی و شیلٹر کے خواتین سمیت اپوزیشن اراکین کڑی دھوپ میں بیٹھے ہیں ، سڑک پر نماز ادا کی گئی،  ایم پی اے شکیلہ نوید 

کوئٹہ،  عوام کے حق پر ڈاکہ قبول نہیں،  حکومت جو بھی حربے آزمائے احتجاج جاری رہے گا ، ایم پی اے شکیلہ نوید دہوار