ادویہ سکینڈل پر ظفر مرزا کیخلاف شکایت کی جانچ پڑتال، عامر کیانی سے انکوائری کی منظوری

حکومتی عہدیداروں کے گرد بھی نیب کا شکنجہ سخت ہونے لگا،چیئرمین نیب نے ادویات سکینڈل میں وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹرظفر مرزا کیخلاف شکایات کی جانچ پڑتال کرنے اور تحریک انصاف دور حکومت کے سابق وفاقی وزیر برائے نیشنل ہیلتھ سروسز اینڈ کوآرڈی نیشن عامر محمود کیانی کیخلاف انکوائری کی منظوری دیدی۔نیب اعلامیہ کے مطابق گزشتہ روز چیئرمین قومی احتساب بیورو جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی زیر صدارت نیب ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں 3 انکوائریوں کی منظوری دی گئی۔اجلاس میں سول ایوی ایشن اورکیپٹل ڈویلپمنٹ اتھارٹی( سی ڈی اے )کے افسروں اور اہلکاروں کیخلاف بھی بدعنوانی کیسز کی انکوائریوں کی منظوری دیدی گئی ۔ نیب ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں مختلف کیسز اور انکوائریوں میں پیشرفت کا جائزہ لیا گیا۔قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈکے اجلاس میں وفاقی وزارت پٹرولیم اینڈ نیچرل ریسورسز کے افسروں،اہلکاروں اور دیگر کیخلاف انکوائری آڈٹ پیراز کے جائزہ کے بعدوفاقی وزارت پٹرولیم اینڈ نیچرل ریسورسز کو مزید قانونی کارروائی کیلئے بھجوانے کی منظوری دی۔چیئرمین جاویداقبال نے نیب کے تمام ڈائریکٹر جنرلز کو ہدایت کی کہ شکایات کی جانچ پڑتال ، انکوائریاں اور انویسٹی گیشنز مقررہ وقت کے اندر قانون کے مطابق منطقی انجام تک پہنچائی جائیں اور تمام انویسٹی گیشن آفیسرز اور پراسیکیوٹرز پوری تیاری ، ٹھوس شواہد اور قانون کے مطابق معزز عدالتوں میں نیب کے مقدمات کی پیروی کریں تاکہ بدعنوان عناصر کو قانون کے مطابق سزا دلائی جاسکے

Courtesy 92 News