کرونائی وبا کے ایام میں راشن جو گھر میں لازمی رکھا جائے…

کرونائی وبا کے ایام میں راشن جو گھر میں لازمی رکھا جائے…

.
بھوک اور بدامنی جس کا نتیجہ محدود پیمانے پر سول وار کی شکل میں نکلنے کا امکان ہے، چند قدم کے فاصلے پر ہے۔ قدرت کچھ بہتر کرنا بھی چاہتی ہے تو ہماری بری گورننس نے اسے بہت دور دھکیل دیا ہے اور ایک زرعی ملک پر بھوک اور قحط کے سائے گہرے ہو رہے ہیں۔ آج جب کہ یورپ میں سڑکوں پر سائیکلوں کے لیے الگ لین مخصوص کی جا چکی ہے اور چاول، آٹا، پاستا، لیموں، مچھلی، چائے، ڈبہ بند کھانے، وغیرہ، سب کے سب short ہوگئے ہیں، ایک لمبی بھوک اور قتل و غارت سامنے ہے۔

اس موقع پر راشن کے حوالے سے ان اشیا کی فہرست لکھ رہا ہوں جنھیں آپ دو سے تین مہینے تک آرام سے سٹور کرسکیں۔
1: خشک اجناس جیسے آٹا، چاول، دالیں، خشک مسالہ جات، میدہ، بیسن، دلیہ، ڈرائی فروٹ، چینی، شکر۔ وغیرہ۔
2: ہر قسم کی چٹنیاں اور ساسز، (herbs) ہربز، اچار کسی بھی قسم کے jalepinos olives اور دیسی اچار۔
3: اگلی چیز canned foods جیسے کھمبی mushrooms, corn,condensed milk ,kidney beans etc
4: پاستا، سپیگھیٹی، سویاں، کارن فلور، کارن فلیکس اور oat meals
5: آئل، گھی۔
6: شربت اور جوسز
7: چائے، قہوہ، گرین ٹی۔
8: وہ اشیا جنھیں آپ دو ہفتے تک ریفریجریٹر میں رکھ کر استعمال کرلیں مثلًا مکھن، پنیر، ڈرنکس، چاکلیٹس، ٹیٹرا پیک دودھ۔
9: اس کے علاوہ گوشت: چکن بیف جس کو ڈیپ فریز کرنے کی سہولت موجود ہو۔

اس فہرست میں سے ہر گھرانہ اپنی معاشی صورتِ حال کے مطابق اشیا منتخب کرلے۔

.
بھوک اور بدامنی جس کا نتیجہ محدود پیمانے پر سول وار کی شکل میں نکلنے کا امکان ہے، چند قدم کے فاصلے پر ہے۔ قدرت کچھ بہتر کرنا بھی چاہتی ہے تو ہماری بری گورننس نے اسے بہت دور دھکیل دیا ہے اور ایک زرعی ملک پر بھوک اور قحط کے سائے گہرے ہو رہے ہیں۔ آج جب کہ یورپ میں سڑکوں پر سائیکلوں کے لیے الگ لین مخصوص کی جا چکی ہے اور چاول، آٹا، پاستا، لیموں، مچھلی، چائے، ڈبہ بند کھانے، وغیرہ، سب کے سب short ہوگئے ہیں، ایک لمبی بھوک اور قتل و غارت سامنے ہے۔

اس موقع پر راشن کے حوالے سے ان اشیا کی فہرست لکھ رہا ہوں جنھیں آپ دو سے تین مہینے تک آرام سے سٹور کرسکیں۔
1: خشک اجناس جیسے آٹا، چاول، دالیں، خشک مسالہ جات، میدہ، بیسن، دلیہ، ڈرائی فروٹ، چینی، شکر۔ وغیرہ۔
2: ہر قسم کی چٹنیاں اور ساسز، (herbs) ہربز، اچار کسی بھی قسم کے jalepinos olives اور دیسی اچار۔
3: اگلی چیز canned foods جیسے کھمبی mushrooms, corn,condensed milk ,kidney beans etc
4: پاستا، سپیگھیٹی، سویاں، کارن فلور، کارن فلیکس اور oat meals
5: آئل، گھی۔
6: شربت اور جوسز
7: چائے، قہوہ، گرین ٹی۔
8: وہ اشیا جنھیں آپ دو ہفتے تک ریفریجریٹر میں رکھ کر استعمال کرلیں مثلًا مکھن، پنیر، ڈرنکس، چاکلیٹس، ٹیٹرا پیک دودھ۔
9: اس کے علاوہ گوشت: چکن بیف جس کو ڈیپ فریز کرنے کی سہولت موجود ہو۔

اس فہرست میں سے ہر گھرانہ اپنی معاشی صورتِ حال کے مطابق اشیا منتخب کرلے۔

قیوم سندھو

کیٹاگری میں : صحت