بیرسٹر مرتضی وہاب نے کورونا مریضوں کے حوالے سے سندھ اور پنجاب کا موازنہ پیش کردیا

بیرسٹر مرتضی وہاب نے کورونا مریضوں کے حوالے سے سندھ اور پنجاب کا موازنہ پیش کردیا

کورونا سے بچاؤ کے لئے سندھ حکومت نے بہتر اور بروقت اقدامات اُٹھائے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

سندھ میں اب تک 34 ہزار سے زائد افراد کورونا وائرس کا شکار ہوئے۔ترجمان سندھ حکومت

جن میں 619 افراد اللہ کو پیارے ہوگئے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

الحمداللہ سندھ میں تقریباً اٹھارہ ہزار مریض کورونا سے شفایاب ہوچکے ہیں۔بیرسٹر مرتضی وہاب

سندھ سے دوگنی آبادی والے صوبے پنجاب کی صورتحال سندھ سے مختلف ہے۔

پنجاب میں 33 ہزار 144 کورونا کے مریض ہیں۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

پنجاب میں مریض سندھ سے کم جبکہ اموات کی شرح زیادہ ہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

پنجاب میں 629 اموات ہوئی ہیں جس پر ہمیں دلی دکھ ہے۔بیرسٹر مرتضی وہاب

پنجاب میں کورونا سے صحیتاب ہونے والے افراد کی تعداد صرف 7ہزار 806 ہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

یہ معلومات وفاقی حکومت کی کووڈ ویب سائٹ پر موجود ہے

ہمیں تمام اموات چاہے ملک کے کسی بھی حصے میں ہوں انتہائی دکھ ہے

لیکن اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ سندھ نے کورونا سے بچاؤ کے لئے جو اقدامات کئے وہ بہتر تھے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

ہم تنقید پر یقین نہیں بلکہ کورونا سے بچاؤ کے لئے حل پر توجہ دینا چاہتے ہیں۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

وفاقی حکومت ٹرانسپورٹ اور کاروبار کھولنے کے صرف احکامات صادر نہ فرمائے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

وفاقی حکومت صوبوں کو سہولیات دینے سے گریزاں ہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

آپ حکم صادر فرما کر بری الزمہ نہیں ہوسکتے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

ایسا نہیں ہوسکتا کہ آپ حکم فرما کر تمام تر زمہ داری صوبائی حکومت پر ڈال دیں

وفاقی حکومت کے لیڈران خود احتیاطی تدابیر اختیار کریں تاکہ عام آدمی بھی اس پر عمل کرے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

لاک ڈاؤن میں نرمی سے کورونا کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہوا

لہذا وفاقی حکومت آزاد کشمیر ، گلگت بلتستان سمیت تمام صوبوں کے ہیلتھ کیئر نظام میں معاونت بھی کرے

وفاقی حکومت سندھ سمیت تمام صوبائی حکومتوں کے ساتھ ملکر کام کرے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب

آئیے زمہ دار حکومت اور زمہ دار شہری ہونے کا ثبوت دیں۔

اللہ تعالی ہمیں کورونا وباء سے محفوظ رکھے اور پوری انسانیت کو اس سے چھٹکارا دے۔ آمین۔ بیرسٹر مرتضی وہاب