معذور ایرانی خاتون پیروں سے کینوس پر رنگ بکھیرنے میں ماہر

ایران کی ایک معذور خاتون نے اپنی معذوری کو مجبوری نہ بنا کر اس بات کا عملی ثبوت دیدیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اپنے پیروں کے ذریعے تصاویر بنانے میں ماہرایرانی خاتون اپنے پیروں سے کینوس پر رنگ بکھیرنے میں بھی ماہر ہے۔
ایران کے شہر Sefidshahrسے تعلق رکھنے والی اکتیس سالہ فاطمہ حمامی نصرابادی نامی خاتون پیدائشی طور پرمفلوج ہے لیکن انہوں نے اپنی معذوری کو مجبوری نہ بنا کر یہ ثابت کردیا کہ معذوری مجبوری نہیں ہوتی۔

ایرانی مصورہ کی تیار کردہ تصاویر دیکھ کر لوگ نہ صرف اُس کے فن کو سراہتے ہیں بلکہ اُس کے ہمت و حوصلے کیبھی خوب داد دیتے ہیں۔

انہوں نے لیونل میسی، کرسٹیانو رونالڈوسمیت نامور شخصیات کے پورٹریٹس بنانے کے بعد اُن میں رنگ بھرے