انور مقصود کی پاکستانی کرکٹرز پر تنقید

پاکستان شوبز انڈسٹری کے مشہور ترین مزح نگار، شاعر، مصنف، ٹی وی میزبان اور مصور انور مقصود نے اپنے مداحوں کی جانب سے کیے گئے سوالات کا جواب دیتے ہوئے پاکستانی کرکٹرز کی ناقص پرفارمنس پر اُنہیں شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

اسٹرنگز بینڈ کے رکن اور نامور کمپوزر و گلوکار بلال مقصود نے ایک بار پھر اپنے والد اور پاکستان مشہور ترین مزح نگار، شاعر، مصنف، ٹی وی میزبان اور مصور انور مقصود کے ساتھ سوال و جوابات کا سیشن رکھا اور اِس سیشن میں بھی انور مقصود نے اپنے مداحوں کے 10 سوالات کے جواب دیے۔

سوال و جواب سیشن کے راؤنڈ 2 کی ویڈیو بلال مقصود نےسماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر پوسٹ کی
بلال مقصود نے سوال و جواب کے راؤنڈ 2 کا آغاز کرتے ہوئے انور مقصود سے قومی کرکٹ ٹیم کے دورۂ انگلینڈ کے حوالے سے سوال کیا کہ ہمارے کھلاڑی کس طرح کی پرفارمنس دیں گے؟

اس سوال کے جواب میں انور مقصود نے قومی کرکٹرز کی پرفارمنس پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ’لاک ڈاؤن کے دوران ہمارے کھلاڑی گھروں میں کرکٹ کھیل رہے ہیں اور میں اُن کی بیٹنگ دیکھ کر حیران رہ گیا ہوں۔‘

انور مقصود نے کہا کہ ’پہلی بار میں نے ہمارے کھلاڑیوں کو اتنی اچھی بیٹنگ کرتے ہوئے دیکھا ہے۔‘

اُنہوں نےکہا کہ ’میں کہتا ہوں کہ پی سی بی انگلش کرکٹرز سے بات کرے کہ میچ گراؤنڈ کے بجائے اپنے گھروں میں ہی رکھیں کیونکہ ہمارے قومی کرکٹرز گھروں میں بہت اچھا کھیلتے ہیں۔‘

انور مقصود نے کہا کہ ’ہمارے کھلاڑی جس طرح گھر میں کھیلتے ہیں ان کو کوئی بھی نہیں ہرا سکتا، یہ اپنی پرفارمنس سے تہلکہ مچا دیں گے۔‘

بلال مقصود کے دوسرے سوال کے جواب میں انور مقصود نے طنز و مزاح والے انداز میں پرویز خٹک پر تنقید کی۔

گلوکار نے اپنے والد سے تیسرا سوال کیا کہ اب گرمیاں آگئی ہیں اور اس کے ساتھ ہی لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ بھی بڑھ جائے گا تو اِس پر آپ کیا کہنا چاہیں گے؟

انور مقصود نے اس سوال کا دلچسپ جواب دیتے ہوئے کہا کہ ’جہاں نقصان ہے وہاں فائدہ بھی ہے، جیسے ہی بجلی جاتی ہے میں ٹیلیوژن کے سامنے بیٹھے جاتا ہوں اور پھر اپنا پسندیدہ پروگرام دیکھتا ہوں