سندھ میں لاک ڈاؤن وفاق کےفیصلے سےمشروط

طیارہ حادثہ میں وزيراعظم کا نوٹس، حکام سے بريفنگ طلب کرلی۔ پی آئی اے اور ایوی ایشن حکام وزیراعظم کو ابتدائی رپورٹ پر بريفنگ دينگے۔ وزیراعظم عمران خان کو حادثہ کی تحقیقات سے متعلق آگاہ کیا جائے گا۔

پی آئی اے طيارہ حادثے کی تحقيقات جاری۔ فرانسیسی تحقیقاتی ٹیم کا تیسرے روز بھی جائے حادثہ کا دورہ۔ کاک پٹ کا وائس ريکارڈر اب تک نہ مل سکا۔ ہیوی مشینری کی ذریعے جہاز کے ملبے کی منتقلی جاری۔

طيارہ حادثے کے بعد پياروں کی لاشيں نہ ملنے کا غم، چھ روز بعد بھی لواحقين کو اپنے پياروں کی تلاش ہے۔ ستانوے ميں سے اننچاس کی لاشيں ورثا کے حوالے کر دی گئیں۔ وزير صحت عزرا پيچوہو کہتی ہيں کہ لاشيں حوالگی کا مرحلہ سات روز ميں مکمل ہوگا۔ ڈی این اے میچنگ کيلئے لیبارٹری 24 گھنٹے کام کررہی ہے۔

ملک بھر ميں لاکھوں کی تعداد ميں ٹڈی دل کا فصلوں اور باغات پر حملہ، فصلوں کو شديد نقصان پہنچنے کا خطرہ۔ ضلعی انتظامیہ کی جانب سے کیے جانے والے اقدامات ناکافی ہے۔ وفاقی وزير فخر امام کہتے ہيں کہ موسمياتی تبديلی کی وجہ سے ٹڈی دل واپس نہيں گيا حکومت اقدامات اٹھا رہی ہے۔

سندھ میں ڈی دل کی فصلوں پر یلغار۔ سندھ حکومت کی وفاق پر تنقيد۔ وزير زراعت سندھ اسماعيل راہو کہتے ہيں کہ وزیراعظم کے سامنے کہا گیا کہ اپریل کے پہلے ہفتے سندھ اور بلوچستان میں اسپرے ہوگا۔ وفاق نے سندھ میں ابھی تک کوئی فضائی اسپرے نہیں کیا۔ ایک سال سے وفاق کو ٹڈی دل سے ہونے والے مسائل بتا رہے ہیں۔

کرونا کا بحران اور ٹڈی دل کے حملے۔ پاکستان ميں بلوچستان اور سندھ شديد متاثر ہوسکتے ہيں۔ فصليں برباد ہوسکتی ہيں۔ قحط پيدا ہوسکتا ہے۔ کرونا بحران شديد ہوسکتا ہے۔ اقوام متحدہ کی ايگريکلچر ايجنسی نے پہلے ہی خبردار کر ديا تھا۔ وزيراعلٰیٰ سندھ پہلے ہی وزيراعظم کو اس بارے ميں خط لکھ چکے ہیں۔

پاکستان ميں 24 گھنٹے ميں مزيد 35 اموات، مجموعی تعداد ايک ہزار دو سو ساٹھ ہوگئی۔ ملک بھر ميں کرونا کيسز کی تعداد اکسٹھ ہزار سے زائد ہوگئی۔ سندھ ميں چوبيس ہزار، پنجاب ميں بائيس ہزار سے زائد مريض۔ کے پی ميں آٹھ ہزار چار سو تراسی اور بلوچستان ميں تين ہزار چھ سو سولہ کيسز رپورٹ ہوئے۔

سندھ ميں پيپلز پارٹی کے مزيد دو ارکان اسمبلی ميں کرونا وائرس کی تصديق۔ ايم پی اے سعدیہ جاوید اور ساجد جوکھیو کا ٹيسٹ پازيٹو آگيا۔ مرتضیٰ بلوچ کی حالت تشویشناک۔

عيد تو گزر گئی۔ کيا سندھ ميں دوبارہ لاک ڈاؤن ہوگا۔ سندھ حکومت نے معاملہ وفاق کے فيصلے سے مشروط کر ديا۔ پی ٹی آئی نے مطالبہ کیا کہ لاک ڈاؤن کريں مگر معاشی لاک ڈاؤن نہ کريں۔ ٹرانسپورٹرز کہتے ہيں کہ بازار کھلے ہيں تو ہميں بھی بسيں چلانے کی اجازت ملنی چاہيے۔

پنجاب ميں چار دن کاروبار اور تين دن لاک ڈاؤن ہوگا، فيصلہ ہوگيا۔ بازار اور مالز صبح 9 سے شام 7 بجے تک کھليں گے۔ صرف ميڈيکل اسٹورز کو 24 گھنٹے کام کی اجازت ہوگی۔ دودھ دہی کی دکانيں، کریانہ، تندور اور بیکريز پورا ہفتہ کھلی رہيں گی۔

کرونا وائرس پر آج فنانسنگ فار ڈویلپمنٹ سے متعلق ورچوئل اجلاس ہوگا۔ وزيراعظم پاکستان بھی شريک ہونگے۔ ترقی پذیر ممالک کے قرضوں سے متعلق ایجنڈا بھی اجلاس میں زیر بحث آئے گا۔ سعودی ولی عہد اور برطانوی وزيراعظم سمیت دیگر رہنما خطاب کریں گے۔

دنيا بھر ميں کرونا سے تين لاکھ ستاون ہزار سے زائد افراد لقمہ اجل بن گئے۔ پانچ لاکھ اسی ہزار کے قريب متاثر۔ امريکا ميں ايک لاکھ سے زائد ہلاک، اموات ميں سب سے آگے نکل گيا۔ اموات کے اعتبار سے متاثرہ ترین ممالک کی فہرست میں برازیل، برطانیہ، اٹلی، فرانس اور اسپین شامل ہے۔

آج پاکستان یوم تکبیر منا رہا ہے۔ اٹھائیس مئی انیس سو اٹھانوے کو پاکستان نے چاغی میں پانچ کامیاب ایٹمی دھماکے کئے تھے جس کے بعد پاکستان دنيا کی ساتويں ايٹمی طاقت بن کر ابھرا۔

پاکستان کو اسلامی دنیا کی واحد ایٹمی طاقت بننے کا اعزاز حاصل ہوا۔ وفاقی وزیر اطلاعات سینیٹر شبلی فراز نے ٹویٹ میں لکھا کہ مریم نواز ایٹمی قوت بنانے والی ایک نسل کی محنت اپنے خاندان سے نہ جوڑیں۔ اپنے کارکنوں کو تنہا چھوڑ کر ہر مرتبہ میدان سے بھاگنے والوں سے قوم آگاہ ہے۔

ملک بھر ميں آج شام سے بادل جم کے برسيں گے۔ پنجاب، بلوچستان اور کے پی ميں تيز ہوا کے ساتھ بارش ہوگی۔ بارشوں کا سلسلہ منگل کی شام تک جاری رہے گا۔ سندھ شديد گرمی کی لپيٹ ميں ہے۔ کراچی کا موسم گرم اور خشک ہے جس کی وجہ سے پارہ 37 ڈگری تک جانے کا امکان ہے

Courtesy Samaa news