عالمی ادارہ صحت نے کورونا کیلئے ہائیڈروکسی کلوروکوئن کےتجربات معطل کردئیے

مختلف ملکوں میں کورونا سے بچاؤ کے لیے دواؤں پرکام کرنے والی تنظیم کی سفارش پرپابندی لگائی گئی ہے۔ کیونکہ ایک نئی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ یہ دوا کورونا کے مریضوں میں ہلاکتوں کے امکانات بڑھ سکتے ہیں ۔اوراس سے مریضوں کو کوئی فائدہ نہیں پہنچ رہاہے ۔عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ڈاکٹر ٹیڈروس ادھانوم کا کہنا ہےکہ یہ پابندی عارضی ہے اور وہ دوا کے تمام پہلوؤں کا جائزہ لیں گے۔
خیال رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مارچ میں ملیریا کی دوا کلورو کوئن اور ہائیڈروکسی کلورو کوئن کو کورونا علاج کے لیے تجویز دی تھی ۔ اس وقت کورونا کے علاج کے لیے دنیا بھر میں کئی کمپنیاں اور ادارے اس وقت کورونا وائرس کی 100 سے زائد ویکسینز پر کام کر رہے ہیں جن میں سے پانچ کی انسانوں کی پر آزمائش بھی شروع کر دی گئی ہے۔
واضح رہے کہ مہلک کورونا وائرس سے دنیا بھرمیں مریضوں کیتعداد 55 لاکھ 67ہزارسے سےتجاوز کرگئی جبکہ دنیا بھرمیں اموات کی تعداد3 لاکھ 47 ہزارسے تجاوز کر گئی ہے۔

Courtesy GNN Urdu