ملک بھر کے بیشتر شہروں میں ڈیزل کے بعد پیٹرول کی کمی، کئی پمپس بند

ملک بھر کے بیشتر شہروں میں ڈیزل کے بعد پیٹرول کی کمی ہونے کی وجہ سے کئی پمپس بند ہو گئے ہیں۔ اس حوالے سے تیل کمپنیز کا کہنا ہے کہ بھارت میں تیل کی قیمت پاکستان کے مقابلے دُگنا ہونے کے سبب مال وہاں اسمگل ہورہا ہے۔

اس حوالے سے مزید بتایا گیا ہے کہ تیل کی گرتی ہوئی قیمت کی وجہ سے غیر اعلانیہ طور پر کم ذخیرے کی کوشش کی گئی ہے. مزید بتایا گیا ہے کہ کورونا کے سبب ایک ماہ امپورٹ بندش نے بھی سپلائی چین توڑ دی، بارڈر بند ہونے کے سبب ایرانی ڈیزل کے بجائے ملکی ڈیزل کی کھپت بڑھی جس حوالے سے کسی قسم کی کوئی منصوبہ بندی نہیں کی گئی۔

اس بار تیل کی سپلائی میں کمی کی بندش صرف یہی نہیں بلکہ ایک وجہ یہ بھی بتائی جا رہی ہے جس کے مطابق بھاری نقصان ہونے کی وجہ سے ریفائنریز نے پیداوار محدود کر رکھی ہے، تا ہم دوسری جانب کمپنیز کی جانب سے ذخیرہ اندوزی کی شرائط بھی پوری نہیں کی جا رہیں جو کہ اب کے کاروباری لائسنس کی بنیادی شرط ہے۔

اس وقت پوری دنیا کی معیشت تباہی کی طرف جا رہی ہے جس کے بعد ہر ملک کی حکومت کی جانب سے کوشش کی جا رہی ہے کہ وہ اپنے شہریوں کو بنیادی سہولتیں فراہم کریں، پاکستان میں بھی اس حوالے سے ہر ممکن کوشش کی جا رہی ہے لیکن پیٹرول کی کمی کی وجہ سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

اس حوالے سے ترجمان پیٹرولیم ڈویژن کا کہنا تھا کہ ملک میں پیٹرول کی قلت پوری کرنے لئے پیٹرول موجود ہے، کسی قسم کی کوئی قلت نہیں ہے، بات کرتے ہوئے انہوں نے مزید بتایا ہے کہ ملک میں پیٹرول کی کمی پوری کرنے کے لئے 11 دن کا ذخیرہ موجود ہے. ترجمان پیٹرولیم ڈویژن کے مطابق ملک میں پیٹرول کا 2لاکھ 55ہزار ٹن کا اسٹاک موجو د ہے، کیماڑی میں 58ہزار ٹن پیٹرول کا جہاز لگ چکا ہے
urdupoint-report