اسٹاک مارکیٹ، فروخت بڑھنے سے ملا جلا رجحان، 96 پوائنٹس کی کمی

پاکستان اسٹاک ایکس چینج ، منافع کے حصول کی خاطر فروخت بڑھنے سے اتار چڑھاو کے بعد ملا جلا رحجان رہا، کے ایس ای100انڈیکس میں 96پوائنٹس کی کمی، لیکن سرمایہ کاری مالیت2 ارب 80کروڑ51لاکھ روپے بڑھ گئی ،کہ 55فیصد کمپنیوں کے شیئرز کی قیمتیں گھٹ گئیں، کاروباری حجم بھی بدھ کی نسبت 10.83فیصد کم رہا۔ تفصیلات کے مطابق جمعرات کو مارکیٹ میںکاروبار کا آغاز مثبت ہوا ،آغاز پر کے ایس ای100انڈیکس34ہزار کی نفسیاتی حد کو بحال کرتے ہوئے 34046پوائنٹس کی بلند سطح کو چھو گیا تاہم بعد ازاں عید اور ہفتہ وار تعطیلات کے باعث سرمایہ کار وں نےفروخت بڑھا دی جس کے باعث تیزی مندی میں بدل گئی اورمارکیٹ کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس96.20پوائنٹس کی کمی سے 33836.61پوائنٹس ہو گیا جبکہ کے ایس ای30انڈیکس 47.72پوائنٹس کی کمی سے 14747.60پوائنٹس پر بند ہوا لیکن اس کے برعکس کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس10.57پوائنٹس کے اضافے سے 24380.74پوائنٹس پر آگیا ۔ سرمائے کا مجموعی حجم 64کھرب 68ارب 75کروڑ63لاکھ روپے سے بڑھ کر64 کھرب 71ارب56کروڑ14لاکھ روپے ہو گیاجب کہ کاروباری حجم 14کروڑ72لاکھ 13ہزار شیئرز رہا جو بدھ کی نسبت ۱یک کروڑ78لاکھ 87ہزار شیئرز کم ہے ۔گزشتہ روز مجموعی طور پر340کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے 135کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ،187میں کمی اور 18کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔قیمتوں میں اتار چڑھائو کے اعتبار سے یونی لیور فوڈزکے حصص کی قیمت 682روپے کے اضافے سے 9782روپے اورنیسلے پاکستان کے حصص کی قیمت 80روپے کے اضافے سے 7130روپے ہو گئی جبکہ سیپ ہائر ٹیکس کے حصص کی قیمت 61روپے کی کمی سے 759روپے اورصنوفی ایونٹس کے حصص کی قیمت 55.39روپے کی کمی سے912روپے پر آ گئی ۔نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ سے ٹی آر جی پاک،ہیسکول پٹرول،،میپل لیف،کے الیکٹرک، ہم نیٹ ورک ، ، یونٹی فوڈز ،ایونشن لمیٹیڈٖ،ڈی جی خان سیمنٹ،پاک الیکٹران اورسوئی نادرن گیس کمپنی کے حصص سرفہرست رہے

Courtesy Jang News