600 ارب کی سرمایہ کاری رک گئی لاکھوں افراد بے روزگار ہیں محمد حسن بخشی چیئرمین آباد

حکومت کو ادراک ہے کہ معیشت کی ترقی اور شہریوں کو افورڈایبل رہائشی سہولت کی فراہمی کا راز تعمیراتی شعبے کی ترقی پر منحصر ہے ۔

ایسوسی ایشن آف بلڈرز اینڈ ڈویلپرز ۔ آباد ۔۔کے چیئرمین محمد حسن بخشی کی فکر انگیز اور دو ٹوک باتیں

CDA اور CAA ئے مل کر کاروبار دوست پالیسی تشکیل دی

پورے ملک میں کثیر المنزلہ تعمیرات کی حوصلہ افزائی کی جانی چاہیے

پاکستان جیسے زرعی ملک کی زرعی اراضی کو محفوظ بنانے کے لئے کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیر ناگزیر ہے ۔ محمد حسن بخشی چیئرمین آباد

کراچی میں دو برس کے قریب کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیر پر پابندی سے معیشت کو ناقابل تلافی نقصان
پہنچا

وزیراعظم عمران خان کراچی شہر میں تعمیراتی شعبے کے استحکام کے لئے ضروری احکام جاری کریں

محمد حسن بخشی کا مزید کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان ویژنری لیڈر ہیں اور انھیں مکمل ادراک ہے کہ معیشت کی ترقی اور شہریوں کو اچھی رہائش کی سہولت فراہم کرنے کا راز تعمیراتی شعبے کی ترقی پر منحصر ہے اس لئے سی ڈی اے اور سی اے اے کو چاہئے کیوں مل کر ایک کاروبار دوست پالیسی تشکیل دی تاکہ بلڈرز اور ڈویلپرز آسان اور کاروبار دوست ماحول سے فائدہ اٹھا سکیں اور کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیرات ممکن ہو۔پورے ملک میں بلند اور کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیر کی حوصلہ افزائی کی جانی چاہیے پاکستان ایک زرعی ملک ہے جس کی آبادی میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے زرعی ملک میں زرعی اراضی کو محفوظ بنانے کے لیے ملک میں کثیر المنزلہ عمارتوں کی تعمیرات ناگزیر ہیں کراچی میں دو برس کے قریب بلند عمارتوں کی تعمیر پر پابندی کے باعث ملکی معیشت کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا اب پابندی ختم ہوچکی ہے اس کے باوجود سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی ایس بی سی اے کی جانب سے نقشوں کی منظوری نہیں دی جا رہی پاکستان کے میگا سٹی میں تعمیراتی شعبہ زوال کی جانب گامزن ہے کراچی کے بلڈرز اور ڈویلپرز کی راہ میں مختلف شکلوں میں روڑے اٹکائے جا رہے ہیں جس کے نتیجے میں 600 ارب روپے سے زائد کی سرمایہ کاری کی گئی ہے اور لاکھوں افراد بے روزگار ہیں وزیراعظم عمران خان کو اس صورتحال کا نوٹس لینے کی اپیل کرتے ہیں اور جاتے ہیں کہ کراچی شہر میں تعمیراتی شعبے کے استحکام کے لیے وزیراعظم فوری طور پر ضروری احکامات جاری کریں


اپنا تبصرہ بھیجیں