ٹینس اسٹار ثانیہ مرزا نے ایک اور بڑا ایوارڈ اپنے نام کرلیا

نئی دہلی : بھارتی ٹینس اسٹار ثانیہ مرزا نے فیڈ کپ ہارٹ ایوارڈ اپنے نام کرکے نئی تاریخ رقم کردی، وہ بھارت کی پہلی کھلاڑی ہیں جنہیں اس اعزاز سے نوازا گیا، انہوں نے انعامی رقم کرونا فنڈ میں جمع کرادی۔

تفصیلات کے مطابق بھارت کی معروف ٹینس اسٹار اور پاکستانی کرکٹر شعیب ملک کی اہلیہ ثانیہ مرزا فیڈریشن کپ ہارٹ ایوارڈ جیتنے والی واحد بھارتی بن گئی ہیں۔

ثانیہ نے اس سال تین ریجنل گروپ کےلیے ڈالے گئے تقریباً 17 ہزار ووٹوں میں دس ہزار سے زائد ووٹ حاصل کرتے ہوئے ایشیا اوشیانیا ایوارڈ حاصل کیا ہے
ایشیا اوشیانا زون کی جانب سے بھارتی ٹینس اسٹار ثانیہ مرزا کو فیڈ کپ ہارٹ ایوارڈ کے لیے انڈونیشیا کی پرسکا میڈیلین نوگروہو کے ہمراہ نامزد کیا گیا، فاتح کا انتخاب شائقین کی آن لائن ووٹنگ پر کیاجو یکم سے 8 مئی تک جاری رہی۔

ڈبلز میں اول مقام حاصل کرنے والی اور کئی بار گرینڈ سلام فاتح ثانیہ 2016 کے بعد پہلی بار فیڈ کپ ٹیم میں شامل ہوئی تھیں جبکہ اس سال فیڈ کپ کی بہترین کارکردگی کی بنیاد پر فیڈ کپ ہارٹ ایوارڈ گروپ ون کے لیے چھ کھلاڑیوں کو نامزد کیا گیا تھا۔

اس ایوارڈ کا اعلان آن لائن ووٹنگ کی بنیاد پر کیا گیا جبکہ شائقین نے یکم تا آٹھ مئی کے درمیان آن لائن ووٹنگ میں حصہ لیا تھا اور ثانیہ نے 60فیصد سے زائد ووٹ حاصل کئے جس سے ان کی عالمی مقبولیت کا پتہ چلتا ہے۔

ثانیہ مرزا کو انعامی رقم دو ہزار امریکی ڈالر حاصل ہوئے جسے 33 سالہ حیدرآبادی کھلاڑی نے کوویڈ۔19 وبا کے خلاف لڑائی کے لیے تلنگانہ سی ایم ریلیف فنڈ کے لیے عطیہ دینے کا اعلان کیا ہے۔