لاک ڈاون میں نرمی کےبعد سےتاحال 68 افراد آئی سی یو بیڈز پر ہیں

کراچی(اسٹاف رپورٹر)عالمی وباء کورونا وائرس کے حوالے سے پی ٹی آئی رہنماوں کےمتضاد بیانات پر ترجمان سندھ حکومت و مشیر قانون بیرسٹر مرتضی وہاب نے ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ سندھ حکومت پر الزام لگایاجاتاہےکہ کورونا وائرس کی روک تھام کےلیے ہمارے فیصلے ضرورت سےزیادہ ہیں پی ٹی آئی کو کوئی لیڈر کہتاہےکہ کورونا وائرس ایک معمولی فُلو ہے جبکہ پی ٹی آئی رہنما الزام لگاتے ہیں کہ کورونا پازیٹو کی تعداد غلط بتائی جارہی ہے شاید یہ لوگ لاعلم ہیں کہ سندھ میں کورونا وائرس سےمتاثرہ 198 افراد انتقال کرچکے ہیں اتنی اموات کےبعد بھی پی ٹی آئی کے لوگ کہتےہیں کہ پریشان ہونے کی بات نہیں ہے یہ بات زرا ان متاثرہ افراد سے جاکر پوچھیں جنکے پیارے اس وباء کا شکار ہوکر جہان فانی سے کوچ کر گئے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ الزام لگایاجاتاہےکہ سندھ حکومت کےفیصلے کراچی دشمنی پر مبنی ہیں۔ بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ 14اپریل کو لاک ڈاون میں نرمی کےبعد سےتاحال 68 افراد آئی سی یو بیڈز پر ہیں

آئی سی یو بیڈز پر موجود ان مریضوں میں سے62کاتعلق کراچی سےہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ پی ٹی آئی رہنما ایک بار پھرلسانیت کو فروغ دینے کی کوشش کررہے ہیں اور محض پیپلزپارٹی کی حکومت کے خلاف سازشوں میں مصروف ہیں خدارا اس مشکل گھڑی میں پی ٹی آئی والے ہوش کےناخن لیں اور ہر معاملے پرسیاست کرنے سے گریز کریں۔

بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ سیاست کے لئے وقت پڑا ہے اس وقت تو عوام کی جانوں کو بچانے کی تدبیر کریں بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ اگر آپ ہماری مدد نہیں کرسکتے تو کم ازکم عوام کو گمراہ بھی نہ کریں۔