اطہر شاہ خان عرف جیدی انتقال کر گئے

اردو دنیا کے ممتاز شاعر ، ڈرامہ نگار، فلم ساز اور ٹیلی ویژن کے کردار جیدی سے شہرت حاصل کرنے والے منجھے ہوئے اداکار اطہر شاہ خان جیدی ہم سے جدا ہوگئے ، وہ کئی برس سے شگر اور گردے کے مرض میں مبتلا تھے۔

اطہر شاہ خان جیدی نے لاہور سے ابتدائی تعلیم حاصل کرنے کے بعد پشاور سے سیکنڈری تک پڑھا اور پھر کراچی میں اُردو سائنس کالج سے گریجویشن کیا، بعدازاں انہوں نے پنجاب یونی ورسٹی سے صحافت کے شعبے میں ماسٹرز کیا۔

ان کا شمار ٹیلی ویژن کے ابتدائی ڈرامہ نگاروں اور فن کاروں میں کیا جاتا ہے۔

اطہر شاہ خان کی سپرہٹ ڈرامہ سیریلز میں انتظار فرمائیے، ہیلو ہیلو، جانے دو، برگر فیملی، آشیانہ، آپ جناب، جیدی اِن ٹربل، پرابلم ہائوس، ہائے جیدی، کیسے کیسے خواب، بااَدب با ملاحظہ ہوشیار اور دیگر ڈرامے شامل ہیں۔

انتظار فرمائیے، وہ سیریل تھی جس نے اطہر شاہ خان کو ’جیدی‘ بنا کر شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا تھا۔

2001ء میں انہیں حکومت پاکستان کی جانب سے پرائیڈ آف پرفارمنس ایوارڈ سے نوازا گیا، پاکستان ٹیلی ویژن نے جب اپنی سلور جوبلی منائی تو اطہر شاہ خان جیدی کو گولڈ میڈل عطا کیا۔

اللہ تعالیٰ اطہر شاہ خان جیدی کی مغفرت فرمائے آمین یارب العالمین۔

وزیر اطلاعات و بلدیات سندھ سید ناصر حسین شاہ نے معروف مزاحیہ اداکار اطہر شاہ خان عرف جیدی کے انتقال پر اپنے تعزیتی بیان میں کہا ہے کہ اطہر شاہ کا انتقال پورے ملک کو سوگوار کرگیا ہے۔ ناصر شاہ کے مطابق لوگوں کو ہنسانے والے آج ہم سب کو رلا کر چلا گیا۔ وزیر اطلاعات سندھ نے اطہر شاہ خان مرحوم کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ فنون لطیفہ کے لئے اطہر شاہ خان کی خدمات لائق تحسین ہیں اور
جیدی کا یادگار کردار اطہر شاہ خان کی عالمی سطح پر پہچان بنا۔اطہرشاہ خان کو مزاحیہ شاعری میں بھی ملکہ حاصل تھا۔وزیر اطلاعات سندھ نے کہا کہ سندھ حکومت اطہر شاہ خان کو شاندار خراج عقیدت پیش کرتی ہے اور غم کی اس گھڑی میں ان کے پسماندگان اور لواحقین سے اظہار تعزیت کرتے ہیں ۔