سابق وفاقی وزیر فردوس عاشق اعوان کی گرفتاری متوقع

سابق وفاقی وزیر اور پی ٹی آئی کی اہم رہنما فردوس عاشق اعوان کے گرد بھی نیب کا گھیرا تنگ ہو گیا ہے اور ان کی گرفتاری متوقع ہے آمدن سے زائد اثاثہ جات کے الزام کے تحت ان کے خلاف تحقیقات کا دائرہ وسیع کر دیا گیا ہے اور میں حکام نے تحریری طور پر ان کے اثاثہ جات اور جائیداد کا ریکارڈ طلب کر لیا ہے ذرائع کے مطابق ان کا شناختی کارڈ نمبر متعلقہ افسران کو فراہم کر کے ایل ڈی اے سمیت مختلف شہروں میں ان کی جائیداد اور اثاثوں کی تفصیلات مانگی گئی ہے واضح رہے کہ ملک میں جاری احتسابی عمل کا دائرہ کار اب صرف اپوزیشن تک محدود نہیں رہا بلکہ حکومتی پارٹی پی ٹی آئی کے رہنما تک بڑھا دیا گیا ہے اس سے قبل پی ٹی آئی کے اہم رہنما علیم خان کی گرفتاری عمل میں آچکی ہے جسے بھی ٹی آئی کی حکومت کے لیے بڑا جھٹکا قرار دیا گیا تھا ذرائع کے مطابق آنے والے دنوں میں مزید اہم سیاسی اور کاروباری شخصیات کی گرفتاریاں متوقع ہیں ۔



اپنا تبصرہ بھیجیں